بیورو کریٹس کی سرکاری گاڑیوں پر جعلی نمبر پلیٹں ، پجارو پر ٹریکٹر کا نمبر لگا دیا گیا

بیورو کریٹس کی سرکاری گاڑیوں پر جعلی نمبر پلیٹں ، پجارو پر ٹریکٹر کا نمبر لگا ...

لاہور(شہباز اکمل جندران) صوبے میں متعدد گزٹیڈ افسروں اور اعلیٰ بیوروکریٹس کی گاڑیاں جعلی نمبر پلیٹوں کی حامل نکلیں،ایس اینڈ جی اے ڈی کی طرف سے مختلف سرکاری محکموں کے صوبائی سیکرٹریوں ، اور دیگر افسروں کو دی جانے والی متعدد گاڑیوں کے نمبر جعلی نکلے، ٹیوٹا کرولا کو ہنڈا سی ڈی 70کا، سوزوکی جیپ کو یاماھا موٹر سائیکل کا جبکہ مٹسو بشی پچاروکو بیلارس ٹریکٹر کاجعلی نمبر لگایا گیا ، باوثوق ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ ایس اینڈ جی اے ڈی کے ٹرانسپورٹ پول پر اکثر گاڑیوں کی دانستاً رجسٹریشن نہیں کروائی جاتی اور گاڑیوں کو اپلائیڈ فار رکھنے کی بجائے ان پر جعلی نمبر پلیٹیں لگائی جاتی ہیں، یہ گاڑیاں مختلف محکموں کے چھوٹے بڑے گزٹیڈ افسروں کے استعما ل میں دی گئی ہیں ان میں لوکل گورنمنٹ ڈیپارٹمنٹ کو دی جانے والی انجن نمبر 846187 اور چیسز نمبر SJ-40-307415کی حامل 1983ماڈل کی سوزوکی جیپ پر LHK 2235کانمبر لگایا گیا ہے، حالانکہ یہ نمبر محمد مشتاق ولد نادربخش کی موٹر سائیکل یاماھا کو الاٹ کیا گیا ہے،جو اس نے بشیر احمد ولد نواب دین کو بیچ دی تھی،اسی طرح انجن نمبر 4BKN4545447کی حامل 1992ماڈل کی مٹسوبشی پک اپ پر LOT 1202کا نمبر لگایا گیا ہے ، حالانکہ یہ نمبرلاہور کے رانا شوکت محمود ولد چوہدری سلطان محمود کے بیلارس ٹریکٹر کوالاٹ کیا گیا ہے،انجن نمبر E10160757اور چیسز نمبرMB-12507781کی حامل 1988ماڈل نسان سنی کو LHK 6440کانمبر لگایا گیا ہے،جو اصل میں عارف بیگم نامی خاتون کی ٹیوٹا کرولا گاڑی کو الاٹ کیا گیا ، اسی طرح گورنز ھاﺅ س کو دی جانے والی انجن نمبر 2E-2823536اور چیسز نمبر EE1009540969کی حامل ٹیوٹا کرولا گاڑی کو LOY 1276 نمبرلگایا گیا ، حالانکہ یہ نمبر اصل میں حبیب اللہ ولد حزب اللہ کی سہراب موٹر سائیکل کو الاٹ کیا گیا جو اس نے خالد پرویز ولد میاں عطااللہ کو بیچ دی ہے، اسی طرح مینجمنگ ڈائریکٹر پنجاب ایجوکیشن فاﺅنڈیشن کو دی جانے والی انجن نمبر 2593240اور چیسز نمبر EE1009506074کی حامل 1995ماڈل ٹیوٹا کرولا کو LOR 3808لگایاگیا ہے ، حالانکہ یہ نمبر اصل میں محمد بوٹا ولد عبدالعزیز کی 85ماڈل سوزوکی ایف ایکس کو الاٹ کیا گیا جو اس نے طارق مسعود ولد شیخ محمد انور مسعود کو بیچ دی ، اسی طرح انجن نمبر 2562934-2Eاورچیسز نمبر EE100-9504728کی حامل 1995ماڈل کی ٹیوٹا کرولا کو LOR 3816کا نمبر لگایا گیا جو اصل میں سہیل اسلم رانا ولد محمد اسلم رانا کی ملکیت 1993ماڈل ہنڈا سی ڈی 70کا الاٹ کیا گیا جو اس نے سٹائل انٹرپرائزز لمیٹیڈ کو بیچ دی، اسی طرح انجن نمبر 815933اور چیسز نمبر 305045کی حامل سوزوکی جیپ کو LHV 4721نمبر لگایا گیا ہے ، حالانکہ یہ نمبر 1987ماڈل کی سرکاری سوزوکی کار کو الاٹ کیا گیا ہے،جس کا انجن نمبر 200362اورچیسز نمبر 106524ہے،اسی طرح انجن نمبر T790053اور چیسز نمبر 906595کی حامل گاڑی کو LEG-07-812لگایا گیا ہے جس کاایکسائز اینڈٹیکسیشن ڈیپارٹمنٹ میں ریکارڈ ہی موجود نہیں ہے،اسی طرح انجن نمبر 109438کی حامل 1985ماڈل ہنڈا ایکارڈ گاڑی پر LES 9999نمبر لگایا گیا ہے لیکن ایکسائز اینڈٹیکسیشن ڈیپارٹمنٹ کے پاس اس گاڑی کا ریکارڈ بھی موجود نہیں ہے، اسی طرح انجن نمبر 2626973اورچیسز نمبرEE1009509865کی حامل 1994ماڈل ٹیوٹا کرولاکو LOS 8937نمبر لگایا گیا ہے ، جس کا محکمے کے پاس کوئی رجسٹریشن ریکارڈ موجود نہیں ہے،اسی طرح انجن نمبر 136110اور چیسز نمبر MB -12508236کی حامل 1989ماڈل نسان سنی کو LHZ 8724 نمبر لگایا گیا ہے ، حالانکہ یہ نمبر ایس اینڈ جی اے ڈی ہی کی ملکیت 1990ماڈل نسان سیڈان کو الاٹ کیا گیا ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...