یاسین ملک کی طرف سے کشمیری شہداءکو زبردست خراج عقیدت

یاسین ملک کی طرف سے کشمیری شہداءکو زبردست خراج عقیدت

سرینگر(اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میںجموںو کشمیر لبریشن فرنٹ کے چیئرمین محمد یاسین ملک نے عوامی انتفادہ کے شہداءکو زبردست خراج عقیدت پیش کیا ہے ۔ کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق یاسین ملک نے ایک بیان میںکہاکہ بھارتی پولیس نے 18ستمبر 2010کو اسلام آباد کے علاقے کھنہ بل میں تین کشمیری نوجوانوںبلال احمد نجار، نور الامین ڈگہ اور معروف احمد ناتھ کوشہید کر دیا تھا جبکہ اہلکاروںنے اسی دن بارہمولہ میں محمدامین گنائی اورعلی محمد ،سوپور میں مبینہ اختر، پٹن میںانصار اللہ، بمنہ میں فیاض احمد اور پلوامہ میں شبیر احمد ڈار کو بھی بہیمانہ طورپر قتل کردیا تھا ۔ یاسین ملک نے ان تمام شہداءکو زبردست خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہاکہ قابض انتظامیہ کے بلند و بانگ دعوﺅں کے باوجود ان بے گناہ کشمیری نوجوانوں کے قاتلوں کے خلاف آج تک کوئی مقدمہ درج نہیں کیا گیا ہے ۔ انہوںنے کہاکہ انہوںنے بھی اس سلسلے میں ہائی کورٹ میں ایک عرضداشت دائر کر رکھی ہے تاہم پولیس اس سلسلے میں عدالتی احکامات پر عمل درآمد نہیں کر رہی ہے۔ انہوںنے کہاکہ حال ہی میں چیف جوڈیشل مجسٹریٹ اسلام آباد اس سلسلے میں پولیس کے کردارکی مذمت کرتے ہوئے قاتلوں کے خلاف مقدمہ درج کرنے کا حکم جاری کیا ہے ۔تاہم ابھی تک اس عدالتی احکامات پر عمل درآمد نہیں کیا گیا ۔ادھر فرنٹ کے ترجمان نے ایک بیان میں حال ہی میں مقبوضہ وادی میں کشمیری نوجوانوں کی گرفتاری کی شدید مذمت کی ہے ۔

مزید : عالمی منظر


loading...