پاک چین آزاد تجارتی معاہدے دوئم پر جلد دستخط ہونگے ، افاقی وزیر تجارتی

پاک چین آزاد تجارتی معاہدے دوئم پر جلد دستخط ہونگے ، افاقی وزیر تجارتی

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

اسلام آباد.بیجنگ (اے پی پی) وفاقی وزیر تجارت انجینئر خرم دستگیر خان نے کہا ہے کہ پاکستان اور چین کے مابین آزاد تجارتی معاہدے دوئم پر جلد دستخط کر دیئے جائیں گے، دونوں ممالک کی وزارت تجارت کے مابین زیادہ تر معاملات طے پا گئے ہیں،آزاد تجارتی معاہدے دوئم میں پاکستان کے مینوفیکچرنگ سیکٹرکی ڈیمانڈ اور ملکی صارفین کی فلاح کے درمیان ایک توازن قائم کیا گیا ہے جس سے تمام سٹیک ہولڈر زفائدہ اٹھا سکیں گے اور متعدد شعبوں کی محرومیوں کا ازالہ کیا جائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بیجنگ میں چین کے وزیر تجارت سے ملاقات کے بعد جاری ایک بیان میں کیا۔ آزاد تجارتی معاہدے دوئم کے مذاکرات کے آغاز کے بعد دونوں ممالک کے وزرائے تجارت کی یہ پہلی ملاقات ہے جس میں یہ طے پایا کہ معاہدے کو جلد حتمی شکل دی جائیگی ۔دونوں وزرائے تجارت نے اشیاء کے ٹیرف میں کمی پر تبادلہء خیال کیا ۔انہوں نے کہاکہ چینی معیشت پاکستانی معیشت کی نسبت کئی گنا بڑی ہے اور اس ناطے پاکستان کو زیادہ تجارتی مراعات دی جائیں گی۔ مزید برآں تجارتی اعداد و شمار میں فرق کو ختم کرنے اور انڈر انوائسنگ کے مسئلے کو حل کرنے کیلئے الیکٹرانک ڈیٹا انٹر چینج کی تنصیب میں تیزی لانے پر بھی اتفاق کیا گیا۔گزشتہ ماہ وفاقی وزیر کو وزیر اعظم کی طرف سے ہدایت کی گئی تھی کہ وہ ملکی کسٹمز حکام کے ساتھ ملاقات کر کے انڈر انوائسنگ کے مسئلے کا حل نکالیں۔ خرم دستگیر نے چینی وزیر کو پاکستانی برآمدکنندگان کو سوست بارڈر پر پیش آنے والی مشکلات سے بھی آگاہ کیا۔پاک چین اقتصادی راہداری کی تکمیل کے ساتھ سوست بارڈر سے دونوں ممالک کے مابین زمینی تجارت میں کئی گنا اضافہ متوقع ہے ،اس تجارتی موقع کو مد نظر رکھتے ہوئے وفاقی وزیر نے چینی وزیر تجارت کو درخواست کی کہ وہ بارڈر پوسٹ پر پاکستانی تاجروں کو مزید سہولیات بہم پہنچائیں ۔

مزید :

کامرس -