حج کا مہینہ ایثار و قربانی کا درس دیتا ہے،عبدالغفارروپڑی

حج کا مہینہ ایثار و قربانی کا درس دیتا ہے،عبدالغفارروپڑی

  

لاہور(نمائندہ خصوصی) ماہِ ذوالحجہ ہمیں جذبۂ تسلیم و رضا اور جذبۂ ایثار و قربانی کا درس دیتا ہے یہ اللہ کی راہ میں اپنا تن، من دھن قربان کرنے کے عہد کی تجدید کا مہینہ ہے۔ ان خیالا ت کا اظہار جماعت اہل حدیث پاکستان کے امیر حافظ عبدالغفار روپڑی نے گذشتہ روز خطبہ جمعہ کے دوران حاضرین سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ سیدنا ابراہیمؑ کی سیرت اور سیدنا اسماعیلؑ کی فرمانبرداری کا مقدس ذکر قیامت تک فضاؤں میں گونجتا رہے گا۔ انہوں نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ قربانی اللہ کے قرب حاصل کرنے کا خاص ذریعہ ہے۔ سنت ابراہیمی ہمیں راہِ حق میں اپنی جان، مال اور ہر محبوب چیز قربان کرنے کا درس دیتی ہے اور یہی ذوالحجہ میں کی جانے والی قربانی کی اصل روح اور فلسفہ ہے قربانی کا مقصد محض جانوروں کو ذبح کر دینا ہی نہیں بلکہ قربانی کی روح اور فلسفہ یہ ہے کہ بندۂ مومن ایک خاص جذبۂ اخلاص و ایثار، ایمان داری و نیکو کاری، وفاداری اور جذبۂ تقویٰ و پرہیزگاری ہی کے تحت قربانی کا عظیم فریضہ سر انجام دے۔

انہوں نے کہا کہ مسلمان عید قربان کے موقع پر اپنے غریب مسلمان بھائیوں کا خیال رکھیں اور عید کی خوشیوں میں ان کو بھی شامل کریں۔ ذوالحجہ کے دس ایام کی فضیلت و اہمیت بیان کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اللہ تعالیٰ نے ذوالحجہ کے پہلے دس دنوں کی بہت زیادہ فضیلت بیان کی ہے۔

اللہ کے رسولﷺ نے فرمایا کہ ان دس دنوں میں کیے جانے والے نیک اعمال اللہ کو بہت زیادہ پسند ہیں۔ اس موقع پر دنیا بھر کے مسلمانوں اور خصوصاً ملک پاکستان کی سلامتی کیلئے خصوصی دعائیں بھی مانگی گئیں۔

مزید :

میٹروپولیٹن 4 -