جعلی ائیرپورٹ جسے 24 ارب روپے میں بیچ دیا گیا، تاریخ کے بڑے فراڈ کی عقل کو دنگ کر دینے والی داستان

جعلی ائیرپورٹ جسے 24 ارب روپے میں بیچ دیا گیا، تاریخ کے بڑے فراڈ کی عقل کو دنگ ...
جعلی ائیرپورٹ جسے 24 ارب روپے میں بیچ دیا گیا، تاریخ کے بڑے فراڈ کی عقل کو دنگ کر دینے والی داستان

  

ابوجہ(مانیٹرنگ ڈیسک) ہم فراڈ کی خبریں تو اکثر سنتے رہتے ہیں جن میں نوسرباز لوگوں کو ہزاروں اور لاکھوں روپے سے محروم کر دیتے ہیں لیکن نائیجیریا کے یونین بینک کے ایک نوسرباز ڈائریکٹر نے برازیل کے ایک سرمایہ کار سے 24کروڑ 20لاکھ امریکی ڈالر (تقریباً24ارب 20کروڑ روپے)ہتھیا لیے۔ بینک کے ڈائریکٹر ایمانوئل نواڈے نے سرمایہ کار نیلسن ساکاگوچی کو ایک ایسا فرضی ایئرپورٹ فروخت کردیا جس کا زمین پر کوئی وجود ہی نہ تھا۔

ایک موبائل ایپ جو آپ کو بڑے دھوکے سے بچا سکتی ہے

ایمانوئل جو خود یونین بینک نائیجیریاکا ڈائریکٹر تھا، اس نے سنٹرل بینک آف نائیجیریا کے گورنر کا روپ دھارا اور نیلسن سے ملاقات کی۔ ایمانوئل نے اسے بتایا کہ نائیجیریا اپنے دارالحکومت میں ایک نیا ایئرپورٹ بنانا چاہتا ہے لہٰذا وہ اس میں سرمایہ کاری کرے۔اس نے کامیابی سے نیلسن ساکاگوچی کو سرمایہ کاری پر راضی کر لیا۔ نیلسن نے ایمانوئل کو1995ءسے 1998ءکے دوران اسے 19کروڑ ڈالر(تقریباً19ارب روپے)کیش میں اداکردیئے جبکہ باقی رقم انٹرسٹ کی مد میں ادا کی۔

نیلسن کو اس فراڈ کا پتا اس وقت چلا جب اس نے اپنی کمپنی فروخت کرنا چاہی۔

خرید کنندہ نے شک کا اظہار کیا کہ کمپنی کے کل اثاثوں کا نصف سے زائد نائیجیریا میں کیوں پڑا ہے۔ تحقیق کرنے پر فراڈ کی قلعی کھل گئی۔بات عدالت میں چلی گئی جہاں ایمانوئل کو25سال قید اور 1کروڑ ڈالر(تقریباً1ارب روپے) جرمانے کی سزا دی گئی اور اس کے تمام اثاثے ضبط کرنے کا بھی حکم دے دیا گیا۔

”نطفے کا عطیہ دے دو، آئی فون کا نیا ماڈل لے جاﺅ“

مزید :

ڈیلی بائیٹس -