پولیو ایک عفریت ہے جس کا قلع قمع ناگزیر ہے ،سہیل خان ڈپٹی کمشنر

پولیو ایک عفریت ہے جس کا قلع قمع ناگزیر ہے ،سہیل خان ڈپٹی کمشنر

پشاور( سٹاف رپورٹر)ڈپٹی کمشنر ساؤتھ سہیل خان نے کہا ہے کہ پولیو ایک عفریت ہے جس کا قلع قمع کرنا انتہائی ضروری ہے۔ انہوں نے ان خیالات کا اظہار آج کمشنر ہاؤس میں ڈویژن کی سطح پر اس ماہ کی 24تاریخ سے شروع ہونے والی سہ روزہ انسداد پولیو مہم کے انتظامات کے سلسلے میں منعقدہ اجلاس سے کیا۔ اجلاس میں ڈپٹی کمشنر ٹانک ، ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ڈیرہ، اسسٹنٹ کمشنر ریوینیو، آرمی افسران ، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈیرہ ، ٹانک، این ایس ٹی او پی آفیسر، ڈبلیو ایچ او، ای پی آئی، محکمہ پولیس و دیگر متعلقہ محکموں کے افسران و نمائندوں نے شرکت کی۔ اس موقع پر اجلاس کو بتایا گیا کہ ڈیرہ ریجن میں پولیو کے انتظامات کو حتمی شکل دیدی گئی ہے جبکہ چند خامیوں کو دور کرنے کیلئے کوششیں جاری ہیں۔ اجلاس کو مزید بتایا گیا کہ انسداد پولیو مہم کے دوران ضلع ڈیرہ میں 3لاکھ 22ہزار677بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلوانے کا ہدف پورا کیا جائیگا جبکہ اس مقصد کیلئے 1273موبائل ٹیمیں،73فکسڈ،73ٹرانزٹ اور 330ایریا انچارج فرائض سرانجام دیں گے۔ اس طرح ضلع ٹانک میں 7541بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلوائے جائیں گے جبکہ مہم کیلئے 53ٹیمیں ، 11ایریا انچارج کے علاوہ 5ٹرانزٹ پوائنٹ مقرر کیے گئے ہیں جہاں پر 5سال تک کی عمر کے بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلوائے جائیں گے۔اسی طرح ایف آر ڈیرہ ، ٹانک، ساؤتھ میں بھی اہداف کے حصول پر خصوصی توجہ دی جائیگی۔ اجلاس کے شرکاء نے انسداد پولیو مہم کے دوران مسائل و مشکلات سے بھی آگاہ کیا۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر ساؤتھ سہیل خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پولیو کا خاتمہ ہماری مشترکہ ذمہ داری ہے ۔ اس مقصد کیلئے محکمہ صحت کی طرف سے تقویض کردہ ٹیموں کے ساتھ تمام افراد کو مکمل تعاون کرتے ہوئے اپنے 5سال تک کی عمر کے بچوں کو انسداد پولیو کے قطرے پلوا کر قومی فریضہ ادا کرنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ پولیو ٹیموں کو مکمل سیکورٹی فراہم کی جائیگی۔ انہوں نے کہا کہ عملے کی تربیت اور انتظامات میں کوئی کوتاہی باقی نہ رہے۔ تمام تر انتظامات بروقت مکمل کر لیے جائیں تاکہ کوئی بچہ انسداد پولیو کے قطروں سے محروم رہ کر عمر بھر کی معذوری کا شکار نہ ہو جائے جبکہ اس فریضے کی تکمیل میں تمام اداروں کو باہمی تعاون کا مظاہرہ کرنا چاہیے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر