راولپنڈی،فوڈسیفٹی ٹیموں کی کاروائی7فوڈ پوائنٹس سربمہر کردیے

راولپنڈی،فوڈسیفٹی ٹیموں کی کاروائی7فوڈ پوائنٹس سربمہر کردیے

راولپنڈی( سٹی رپورٹر)ڈائریکٹرجنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کیپٹن(ر) محمد عثمان کی ہدایت پرفوڈسیفٹی ٹیموں نے ملاوٹ مافیا کے خلاف کارروائیاں کر تے ہو ئے7فوڈ پوائنٹس کو مضر صحت خوراک کی فراہمی اور صفائی کے غیر معیاری انتظامات پر سر بمہر کر دیا۔متعدد فوڈ پوائنٹس کو حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر 175,000کے جرمانے عائد کیے۔تفصیلات کے مطابق پنجاب فوڈ اتھارٹی کی فوڈسیفٹی ٹیموں نے ڈائریکٹرجنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کیپٹن(ر) محمد عثمان کی ہدایت پرراولپنڈی کے مختلف علاقوں میں چیکنگ کے دوران مضر صحت اجزاء کے استعمال،چوہوں کے فضلہ جات کی موجودگی ،گندے اور بد بودار ماحول کی بناء پر صوفی چنے ،طیبہ ریفریشمنٹ اور مدینہ نہاری ہاؤس کو سیل کر دیا۔دوسری جانب منظور اینڈ نمکو پروڈکشن یونٹ کو ناقص آئل کے استعمال،غلط لیبلنگ جبکہ عبدالماجد کر یانہ سٹور کو ممنوعہ گٹکا کی فروخت پر سر بمہر کیا گیا۔اٹک کی فوڈ سیفٹی ٹیموں نے کھلے رنگوں کے استعمال،کھانے پینے کی اشیاء پر حشرات کی موجودگی پر الحمرا فاسٹ فوڈ سنٹر جبکہ چکوال میں استعمال شدہ آئل کا بائیوڈیزل کمپنی سے کنٹریکٹ نہ ہو نے،لیبلنگ کی عدم مو جودگی اور صفائی کے ناقص انتظامات پر بابو جی فوڈز کو سیل کیا ۔ڈی جی فوڈ اتھارٹی کی ہدایت پر ڈیری سیفٹی ٹیموں نے شہر کے مختلف داخلی راستوں پرناکے لگا کر متعدد گاڑیوں کی چیکنگ کی۔ مختلف شہروں سے آنے والی متعدد گاڑیوں کی چیکنگ کے دوران134,853لیٹر دودھ کی چیکنگ کر تے ہوئے12,565لیٹرمضر صحت دودھ کو تلف کیاگیا۔ڈویژن بھر میں کی گئی کارروائیوں کے دوران متعدد فوڈ پوائنٹس کو حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر 175,000کے جر مانے عائد کر تے ہو ئے بھاری مقدار میں مضر صحت دودھ اور ناقص خوراک کو تلف کیا گیا۔ڈی جی فوڈ اتھارٹی کا کہنا تھا کہ پاؤڈر اور کیمیکل سے تیار شدہ جعلی دودھ میں برف ڈال کر فروخت کیلئے لایا جا رہا تھا۔کیپٹن)ر) محمد عثمان کاکہنا تھا کہ پاؤڈر اور کیمیکل ملا مضرصحت دودھ متعدد موذی امراض کی وجہ بنتا ہے۔ صوبہ بھر میں عوام کو ناقص اور غیر معیاری دودھ سے بچانے کے لیے ملاوٹ مافیا کے خلاف کاروائیوں میں مزید تیزی لائی جا رہی ہے۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر