سعودی عرب، بھارت، ایران، افغانستان میں 12 ہزار پاکستانی جیلوں میں قید

سعودی عرب، بھارت، ایران، افغانستان میں 12 ہزار پاکستانی جیلوں میں قید
سعودی عرب، بھارت، ایران، افغانستان میں 12 ہزار پاکستانی جیلوں میں قید

  

لاہور (ویب ڈیسک) بیرون ممالک میں قید 12 ہزار کے قریب پاکستانی بے یاروں مددگار سزائے کاٹنے پر مجبور ہیں۔

روزنامہ خبریں کی رپورٹ کے مطابق 8.8 ملین پاکستانی 87 ممالک میں رہائش پذیر ہے جن میں سے 12 ہزار کے قریب پاکستانی بیرون ممالک جیلوں میں قید ہیں۔ سرکاری دستاویزات کے مطابق سب سے زیادہ سعودی عرب میں 2937 پاکستانی جیلوں میں قید ہیں جو معمولی غلطی کی بناءپر سالوں سے سزائیں کاٹ رہے ہیں لیکن ان کا کوئی پرسان حال نہیں ہے۔ اسی طرح انڈیا میں 10ہزار پاکستانی رہائش پذیر ہیں جن میں سے 582 جیلوں میں قید ہیں اور افغانستان میں 177، ایران میں 186 پاکستانی جیلوں میں قید ہیں۔

رپورٹ کے مطابق چائنہ میں 300 جبکہ امریکہ میں صرف دو پاکستانی جیلوں میں قید ہیں۔ وزارت داخلہ کے مطابق بیرون ممالک میں قید پاکستانیوں کی رہائی کے لئے وزارت خزانہ سے 36000ڈالرز کا فنڈ مانگا گیا ہے جبکہ پاکستانیوں کی رہائی میں مختلف محکمے اور ممالک شامل ہے جس کے باعث مزید وقت بھی درکار ہے۔

دوسری طرف قانونی ماہرین کا کہنا ہے کہ دوسرے ملکوں کی طرح پاکستان میں غیر ملکی پاکستانی قیدیوں کی رہائشی کیلئے مستقل فارم موجود نہیں ہے، کچھ پرائیویٹ تنظیمیں اپنی مدد آپ یہ کوشش کررہی ہیں۔ دوسرے ملکوں میں موجود پاکستانی قیدیوں کو رہائی مل جائے یا ان کی سزا کم ہوجائے۔

قانونی ماہر شعیب شیخ کے مابق پاکستان کو خصوصاً نئی حکومت کو غیر ملکی جیلوں میں قید پاکستانی ان کی پہلی ترجیح ہوں اور اس حوالے سے ایک الگ قانونی ماہرین کی ٹیم بننا چاہیے جو صرف غیر ملکی جیلوں میں قید پاکستانیوں کو ترجیح دیں۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور