بھارت میں 7سالہ لڑکی کا ریپ کردیا گیا 

بھارت میں 7سالہ لڑکی کا ریپ کردیا گیا 
بھارت میں 7سالہ لڑکی کا ریپ کردیا گیا 

  

نئی دہلی (این این آئی)بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی کے علاقے شاہدرا سیما پوری میں 7 سالہ لڑکی کو مبینہ طور پر ریپ کا نشانہ بنایا گیا۔

بھارتی اخبار کے مطابق متاثرہ لڑکی کی والدہ نے پولیس کو بتایا کہ ان کی بیٹی مکان کے باہر کھیل رہی تھی کہ21سالہ پڑوسی نے اسے قریبی جھاڑیوں میں لے جا کر ریپ کا نشانہ بنایا۔سینئر پولیس افسر کا کہنا تھا کہ خاتون نے بتایا کہ جب ان کی بیٹی واپس آئی تو لڑکی کے جسم کے مختلف حصوں سے خون بہہ رہا تھا اور والدہ کے پوچھنے پر لڑکی نے اپنے ساتھ پیش آنے والے واقعہ کی تفصیلات بتائیں۔پولیس کا کہنا تھا کہ متاثرہ لڑکی کی والدہ کی شکایت پر ملزم کے خلاف سیما پوری تھانے میں پی او سی ایس او ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کرلیا گیا۔بعد ازاں دہلی کمیشن برائے خواتین (ڈی سی ڈبلیو) کی چیئرمین سواتی مالیوال نے مذکورہ واقعہ کے حوالے سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹوئٹ بھی کیا۔انہوں نے ٹوئٹر پیغام میں الزام لگایا کہ ملزم لڑکی کو پارک لے گیا اور وہاں اس کے حساس مقامات میں پانی کا پائپ داخل کیا اور بعد ازاں ریپ کیا۔تاہم پولیس کا کہنا تھا کہ لیڈی ڈاکٹر نے لڑکی کا طبی معائنہ کرنے کے بعد بتایا کہ لڑکی کی حالت خطرے سے باہر ہے اور اس کے حساس مقامات میں کسی چیز کے داخل کیے جانے کے شواہد نہیں ملے۔

واضح رہے کہ واقعہ کے بعد لڑکی کو گرو ٹیگ بہادر ہسپتال منتقل کیا گیا تھا۔بعد ازاں پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا جبکہ ڈی سی ڈبلیو کا کہنا تھا کہ وہ ریپ متاثرہ لڑکی کے لیے معاوضے کے لیے درخواست دیں گے۔واضح رہے کہ دہلی پولیس کے اعدادو شمار کے مطابق رواں سال کے پہلے 4 ماہ کے دوران نئی دہلی میں یومیہ 2 بچوں کو ریپ کا نشانہ بنایا گیا۔

مزید : بین الاقوامی