احتساب عدالت میں نیب کی خورشید شاہ سے چلنے کی درخواست، پی پی رہنما کا آصف زرداری کے ساتھ مزید بیٹھنے کا اصرار

احتساب عدالت میں نیب کی خورشید شاہ سے چلنے کی درخواست، پی پی رہنما کا آصف ...
احتساب عدالت میں نیب کی خورشید شاہ سے چلنے کی درخواست، پی پی رہنما کا آصف زرداری کے ساتھ مزید بیٹھنے کا اصرار

  


اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)پیپلزپارٹی کے رہنماخورشیدشاہ نے احتساب عدالت میں آصف زرداری سے ملاقات کی،ملاقات میں ملک کی موجودہ صورتحال سے متعلق بات چیت کی،نیب کی ٹیم خورشیدشاہ سے بار بار اٹھنے کی درخواست کرتی رہی ،نیب افسر نے کہا کہ آپ کا ریمانڈ ملا ہے میٹنگ کی اجازت نہیں ہے ،یہاں آپ انٹرویو دینے نہیں آئے،خورشیدشاہ نے کہا کہ میں نے 15 منٹ بیٹھنا ہے پھر جاﺅں گا۔تفصیلات کے مطابق پیپلزپارٹی کے رہنماخورشیدشاہ نے احتساب عدالت میں آصف زرداری سے ملاقات کی،ملاقات میں ملک کی موجودہ صورتحال سے متعلق بات چیت کی،خورشیدشاہ نے کہا کہ سیاسی مقدمات میں ملوث کرکے انتقام کا نشانہ بنایا جا رہا ہے ،سیاسی مقدمات سے کب تک اپوزیشن کو گرفتار کریں گے ۔صحافی کے سوال ”آپ کو اچانک گرفتار کرلیا گیا“کا جواب دیتے ہوئے خورشید شاہ نے کہا کہ وفاقی وزراءکیخلاف انکوائری چل رہی ہیں ،خودوزیراعظم پر انکوائری چل رہی ہے ،انہوں نے کہا کہ 18 ستمبر کو پیش ہونے کا نیب نوٹس ملا اور گرفتار کرلیا گیا ،حکومت نے مجھ گرفتارکراکر غلطی کی ہے ۔نیب افسر نے خورشیدشاہ سے کہا کہ آپ کا ریمانڈ ملا ہے میٹنگ کی اجازت نہیں ہے ،خورشید شاہ نے کہا کہ میں نے 15 منٹ بیٹھنا ہے پھر جاﺅں گا،اس پر سابق صدر آصف زرداری نے کہا کہ آپ انہیں بیٹھے دیں ایسا نہ کریں،نیب کی ٹیم خورشید شاہ کوبابار اٹھنے کی درخواست کرتی رہی ۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...