آصف فیصلے کو فیڈرل کورٹ آف سوئٹزرلینڈ میں چیلنج کرسکتے ہیں،روی

آصف فیصلے کو فیڈرل کورٹ آف سوئٹزرلینڈ میں چیلنج کرسکتے ہیں،روی

  

سکللندن(نیٹ نیوز) سپاٹ فکسنگ کیس میں سزا یافتہ فاسٹ باﺅلر محمد آصف کے وکیل روی سکل نے کہا ہے کہ فاسٹ باﺅلر کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت کے فیصلے کو فیڈرل کورٹ آف سوئٹزرلینڈ میں چیلنج کرسکتے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز کھیلوں کی عالمی ثالثی عدالت نے فاسٹ باﺅلر محمد آصف اور سلمان بٹ کی آئی سی سی کی پابندی کیخلاف اپیلیں مسترد کردی تھیں۔ سلمان بٹ نے اب سزا کی باقی مدت پوری کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے البتہ آصف خود پر کرکٹ کے دروازے بند کئے جانے کیخلاف قانونی لڑائی جاری رکھیں گے۔ ثالثی عدالت نے ان کے بارے میں فیصلہ کیا تھا کہ پینل کو کوئی ایسا ثبوت نہیں ملا جو آصف کو بے گناہ ثابت کرسکے۔ انہوں نے ناکافی ثبوت پیش کئے۔ ان وجوہات کی بناءپر ہم پوری طرح مطمئن ہیں کہ آصف کے سپاٹ فکسنگ کے جرم میں شریک ہونے میں کوئی شک و شبہ نہیں ہے۔ آصف کے وکیل نے کہا کہ آصف اپنی اپیل میں سب کچھ نہیں ہارے۔ پابندی سے جان چھڑانے کے اور بھی راستے موجود ہیں۔

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -