جنرل ہسپتال میں امراض قلب کے جدیدتشخیصی مرکزکاقیام

جنرل ہسپتال میں امراض قلب کے جدیدتشخیصی مرکزکاقیام

  

لاہور( جنرل رپورٹر)پرنسپل پوسٹ گریجویٹ میڈیکل انسٹی ٹیوٹ پرفیسرانجم حبیب وہرہ نے کہاہے کہ جنرل ہسپتال میں دل کے مریضوں کے لیے ایک کروڑسات لاکھ روپے کی لاگت سے قائم ہونے ولے نئے تشخیصی مرکزکے قیام سے ہسپتال کی خدمت کادائرہ مزیدوسیع ہوگیاہے اور اس انقلابی اقدام سے امراض قلب میں مبتلامریضوں کے علاج معالجے میںبے حدمددملے گی ،ان خیالات کااظہار انہوںنے ایل جی ایچ کے میڈیکل یونٹ تھری میں نئی نصب کی جانے والی ایکو کارڈیوگرافی ،ہولٹرمانیٹرنگ اور ای ٹی ٹی کی جدیدمشینوں کے افتتاح کے موقع پرکیا،تقریب میں پروفیسر خالد مسعودگوندل،پروفیسرآغاشبیرعلی،پروفیسراعجازحسین،پروفیسر خالد بشیر،ڈاکٹر رفیق بشارت،ڈاکٹراسرار الحق طوراور ڈاکٹرشیرازانجم،پروفیسر غیاث النبی طیب سمیت متعدد ڈاکٹرزبھی موجود تھے ،نئے قائم ہونے والے امراض قلب کے تشخیصی مرکز کے انچارج اسسٹنٹ پروفیسر ڈاکٹررفاد احمدہوںگے جبکہ ڈاکٹرطاہرالسلام اور ڈاکٹر عادل ان کے معاون مقررکیے گئے ہیں ،صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے پروفیسر انجم حبیب وہرہ نے کہاکہ تشخیصی سنٹر میںنصب جدیدمشینری کو آپریٹ کرنے کے لیے ڈاکٹروں کی آغا خاںیونیورسٹی کراچی سے خصوصی تربیت کرائی گئی ہے تاکہ وہ مکمل مہارت کے ساتھ دل کی بیماریوںکی تشخیص کرسکیں،انہوںنے کہاکہ جنرل ہسپتال کی اپ گریڈیشن اورمریضوں کو میسرسہولیات کامعیار بڑھانے کے لیے ہرممکن اقدامات کیے جارہے ہیں ۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -