اچھرہ پولیس کا بوڑھے مزدور کے بیٹے پر بہیمانہ تشدد، ہسپتال میں منتقل

اچھرہ پولیس کا بوڑھے مزدور کے بیٹے پر بہیمانہ تشدد، ہسپتال میں منتقل

لاہور(خبرنگار) وردی کی تبدیلی بھی لاہور پولیس کا رویہ نہ بدل سکی۔ اچھرہ پولیس کا بوڑھے مزدور کے بیٹے پر بہیمانہ تشدد، نوجوان کوتشویشناک حالت میں سروسز ہسپتال میں منتقل کر دیا گیا۔ اچھرہ پولیس نے فاضلیہ کالونی کے رہائشی ایک بوڑھے مزدور کے بیٹے نوید پر موبائل چوری کا الزام لگا کر اسے بہیمانہ تشدد کا نشانہ بنایا۔ 24 گھنٹے اپنی حراست میں رکھنے کے بعد جب وہ زخموں سے نڈھال ہو گیا تو بوڑھے باپ کو 500 روپے دے کر بیٹے کے ہمراہ تھانہ سے چلتا کیا۔اچھرہ پولیس کا موقف لینے کی کوشش کی گئی تو تھانے میں موجود محرر نے کسی بھی قسم کا موقف دینے سے انکار کر دیا۔بوڑھا مزدور باپ اپنے بیٹے کو ویل چیئر پر ڈال کر ہسپتالوں کے چکر لگا رہا ہے،بوڑھے باپ نے حکام سے واقعہ کا نوٹس لینے اور ذمے داروں کو کیفر کردار تک پہنچانے کی اپیل کی ہے۔ ایس پی ماڈل ٹاؤن اسماعیل کھاڑک نے بتایا کہ واقعہ پر انکوائری کا حکم دے دیا گیا ہے۔

مزید : علاقائی