چارسدہ ، تحریک انصاف کے ایم پی اے عارف احمد زئی کواغوا ء اور قتل کرنے کی کوشش

چارسدہ ، تحریک انصاف کے ایم پی اے عارف احمد زئی کواغوا ء اور قتل کرنے کی کوشش

چارسدہ (بیورو رپورٹ) تحریک انصاف کے ایم پی اے عارف احمد زئی کواغواء اور قتل کرنے کی کوشش۔ دو گھنٹے تک یر غمال بنا کر ساتھیوں کو تشدد کا نشانہ بنایا ۔ انصاف کی حکومت کا اصل امتحان شروع ۔ ایم پی اے نے پارٹی کے مرکزی نائب صدر فضل محمد خان کے خلاف ایف آئی آر درج کر لی ۔قانونی کاروائی کے علاوہ پارٹی کے قیادت کو آگاہ کیا جائیگا۔ ایم پی اے عارف احمد زئی ۔ تفصیلات کے مطابق پی کے 22چارسدہ سے تحریک انصاف کے ایم پی اے اور پارٹی کے ضلعی صدر عارف احمد زئی ، این اے 8کے سابق امیدوار جہانزیب خان ڈھکی ،ضلع کونسل میں تحریک انصاف کے پارلیمانی لیڈر شاہد اللہ ، پارٹی کے صوبائی رہنماء ڈاکٹر ندیم عالم کے ہمراہ پارٹی کے ناراض کارکن اخترشاہ اور ان کے دیگر ساتھیوں کے ساتھ سرڈھیری میں جرگہ کے بعد حجرہ سے نکل رہے تھے کہ اس دوران 15مسلح افراد ان پر حملہ آور ہو ئے ۔ اس حوالے سے ایم پی اے عارف احمدزئی نے سرڈھیری پولیس اسٹیشن میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی کے ضلعی صدر اور ایم پی اے کی حیثیت سے وہ ناراض کارکنوں کو منانے کیلئے سرڈھیری آئے تھے کہ اس دوران پارٹی کے مرکزی نائب صدر اور اے این سات کے سابق امید وار فضل محمد خان اور ان کے 15مسلح ساتھیوں نے اسلحہ کی نوک پر مجھے اور میرے ساتھیوں کو اغواء کرنے کی کوشش کی اور دو گھنٹے تک یرغمال بنا کر ساتھیوں کو تشدد کا نشانہ بناکر قتل کرنے کی کوشش کی۔انہوں نے مزید کہا کہ اہل علاقہ اور پارٹی کارکنوں نے ہماری جان بچا کر رہائی دلائی ۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی قیادت کو تمام صورتحال سے آگاہ کیا جائیگاجبکہ فضل محمد خان کے خلاف قانونی کاروائی کیلئے تھانہ سرڈھیری میں ایف آئی آر درج کی ہے۔فضل محمد خان کے خلاف پولیس کاروائی کے حوالے سے ایم پی اے عارف احمد زئی نے کہا کہ انصاف کی حکومت میں ہمیں ضرور انصاف ملے گا۔ اس حوالے سے فضل محمد خان کا موقف جاننے کیلئے ان سے کئی بار رابطہ کیا گیا جبکہ ان کو موقف دینے کیلئے پیغام بھی دیا گیا مگر موصوف تحریک انصاف کے کور کمیٹی کے اجلاس میں موجود تھے اسلئے ان کا موقف معلوم نہ ہو سکا ۔

مزید : کراچی صفحہ اول