چاہتے ہیں عدالت سے نصیحت نہیں فیصلہ ہو اور اس پر عملدرآمد بھی ہو:سراج الحق

چاہتے ہیں عدالت سے نصیحت نہیں فیصلہ ہو اور اس پر عملدرآمد بھی ہو:سراج الحق

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق نے پانامہ فیصلے سے قبل کہا ہے کہ ہم چاہتے ہیں کہ عدالت سے نصیحت نہیں بلکہ فیصلہ ہو اور اس پر عملدرآمد بھی ہو۔

”پاناما کیس کے فیصلے میں انشااللہ نون لیگ ۔۔۔“شیخ رشید نے ایسی بات کہہ دی کہ نواز شریف کی خوشی اور عمران خان کی پریشانی کی انتہا نہ رہے گی

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں پانامہ کیس فیصلے سے قبل میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا کہ سپریم کورٹ سے امید رکھتے ہیں کہ کرپشن کا جنازہ نکلے اور دھوم سے نکلے،ہماری لڑائی کرپشن کی بیماری کے خلاف ہے،کرپشن اور پاکستان ساتھ ساتھ نہیں چل سکتے اور ہماری لڑائی انصاف کیلئے ہے۔امیر جماعت اسلامی نے مزید کہا کہ کرپشن کے خلاف ہماری تحری جاری ہے اور ہم نے سب سے پہلے کرپشن کے خلاف اسلام آباد میں دھرنا دیا،دعا ہے کہ اس فیصلے کے نتیجے میں پاکستان کرپشن سے پاک بنے۔

انہوں نے کہا کہ ہم آج عدالت میں ہیں اور ججز اللہ کی عدالت میں ہیں،اس کیس کا نتیجہ جو بھی آئے ہماری قوم اس سے قبل ہی بیدار ہوچکی ہے اور کرپشن کے خلاف ایک شعور بیدار ہوچکا ہے،ہماری تمام مسائل کرپشن کی وجہ سے ہیں اور کرپشن کے خاتمے کیلئے جدوجہد جاری رہے گی۔واضح رہے کہ آج دوپہر 2 بجے سپریم کورٹ میں پانامہ کیس کا فیصلہ سنایا جائے گا۔

مزید : قومی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...