سپریم کورٹ کا آئی ایس آئی ،ایم آئی کو بھی جے آئی ٹی کا حصہ بنانے کا حکم

سپریم کورٹ کا آئی ایس آئی ،ایم آئی کو بھی جے آئی ٹی کا حصہ بنانے کا حکم
سپریم کورٹ کا آئی ایس آئی ،ایم آئی کو بھی جے آئی ٹی کا حصہ بنانے کا حکم

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ نے پانامہ کیس کا فیصلہ سناتے ہوئے جے آئی ٹی بنانے کا حکم دیدیا ہے اور وزیراعظم،حسن اور حسین نواز کوجے آئی ٹی،آئی ایس آئی،ایم آئی،ایف آئی اے ،نیب اور ایس ای سی پی کے نمائندوں کے سامنےپیش ہونے کا بھی حکم دیا ہے۔ عدالت نے فیصلہ سناتے ہوئے حکم دیا کہ جے آئی ٹی ہر دو ہفتے بعد بنچ کو رپورٹ پیش کرے گا اور تحقیقات 2 ماہ میں مکمل کی جائیں گی جبکہ جے آئی ٹی 7دن میں تشکیل دی جائے۔عدالت نے فیصلے میں لکھا کہ ڈی جی ایف آئی اے وائٹ کالر کرائم روکنے میں ناکام رہے جبکہ چیئرمین نیب اپنا کام کرنے میں ناکام رہے۔عدالت نے فیصلہ دیا کہ وزیراعظم کی اہلیت کا فیصلہ جے آئی ٹی کی رپورٹ کے بعد ہوگا۔

بریکنگ نیوز: سپریم کورٹ کا پاناما کیس کی تحقیات کیلئے 6 رکنی جے آئی ٹی بنانے، وزیراعظم ، حسن نواز اور حسین نواز کو جے آئی ٹی کے سامنے پیش ہونے کا حکم, لائیو اپ ڈیٹس

مزید : قومی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...