پاکستانی خواتین نے سعودی عرب میں بھی وہ کام کردیا جو اس سے پہلے صرف پاکستان میں ہوتا تھا، پورے ملک میں دھوم مچ گئی

پاکستانی خواتین نے سعودی عرب میں بھی وہ کام کردیا جو اس سے پہلے صرف پاکستان ...
پاکستانی خواتین نے سعودی عرب میں بھی وہ کام کردیا جو اس سے پہلے صرف پاکستان میں ہوتا تھا، پورے ملک میں دھوم مچ گئی

  

ریاض(مانیٹرنگ ڈیسک) صحرائے عرب میں جشن بہاراں کا کیا کام، لیکن پاکستانی خواتین نے وہاں بھی موسم بہار کی آمد پر جشن بہاراں کا انعقاد کر دکھایا ہے جو اس سے قبل صرف پاکستان میں ہی ہو سکتا تھا۔ سعودی گزٹ کی رپورٹ کے مطابق پاکستانی خواتین کے اس اقدام نے پورے سعودی عرب میں دھوم مچا دی ہے۔ ان پاکستانی خواتین نے ایک بڑے میلے کا انعقاد کیا جس میں فیملیز نے بھرپور شرکت کی اور تمام دن ہلہ گلہ کرتی رہیں۔

رپورٹ کے مطابق فیلمیز کے ساتھ آنے والے مرد پتنگ بازی کرتے رہے اور خواتین اور بچے پیچ لڑتے دیکھ کر خوشی کا اظہار کرتے رہے اور اپنے اپنے کھلاڑیوں مزید بلند پتنگ اڑانے پر اکساتے رہے۔ یہاں نوجوان کرکٹ کھیلتے ہوئے نظر آئے جبکہ اکثر خواتین اپنی پینٹگز کی وہاں نمائش کرتی رہیں اور اپنے دیگر ہنر دکھاتی رہیں۔پاکستانی سفارت خانے کے ایچ او سی شاہ فیصل کاکڑ بھی اپنی فیملی کے ہمراہ اس فیسٹیول میں شریک ہوئے۔

’اس دن میں سٹور پر کپڑے خریدنے گئی، ایک پتلون پسند آئی تو ٹرائی روم میں جاکر آزمانے لگی، اس دوران زمین کی طرف نظر پڑی تو پیروں تلے واقعی زمین نکل گئی کیونکہ وہاں۔۔۔‘ خاتون نے ایسا شرمناک واقعہ بتادیا جو بازار جانے والی ہر لڑکی کو ضرور معلوم ہونا چاہیے

اس فیسٹیول کی منتظمین میں سے ایک معروف آرٹسٹ عصمہ طارق تھیں جو آرٹ ٹیچر بھی ہیں۔ وہ فیسٹیول میں ہونے والے آرٹ اینڈ پینٹنگ بوتھ کا انتظام سنبھال رہی تھیں ان کا کہنا تھا کہ ”خواتین نے آرٹ اور پینٹنگ میں کمال ہنرمندی کا مظاہرہ کیا ہے۔“اس کے علاوہ یہاں فیشن ڈیزائننگ و دیگر کئی طرح کے سٹال لگائے گئے تھے جہاں خواتین نے اپنی تخلیقی صلاحیتوں کا بھرپور مظاہرہ کیا۔

مزید : عرب دنیا