(ن ) لیگ اور پی پی دور میں قرضوں میں اضافہ ہوا،اعجاز چودھری

(ن ) لیگ اور پی پی دور میں قرضوں میں اضافہ ہوا،اعجاز چودھری

لاہور (نمائندہ خصوصی) تحریک انصاف کے مرکزی ایڈیشنل سیکرٹری جنرل اعجازاحمد چوہدری نے کہاہے کہ (ن) لیگ اور پیپلز پارٹی کے دور حکومت میں ملکی قرضوں میں کھربوں روپے کا اضافہ ہوا جبکہ سابق حکمرانو ں نے میثاق جمہوریت کے نام پر لوٹ مارکی ، ملکی معیشت آج جس تباہی کے دہانے پر پہنچی ہو ئی ہے ، عمران خان تو کبھی اقتدار میں نہیں رہے، 1948 سے لے کر 2008 تک سابقہ حکومتوں نے 6ہزار کھرب کا قرض اکٹھا کیا اور پھر اگلے 10سال میں ملک مجموعی طور پر 30 ہزارکھرب کا مقروض ہو گیا، قوم جاننا چاہتی ہے کہ 24ہزار کھرب کے اضافے کا ذمے دار کون ہے؟ جب مسلم لیگ (ن) کی حکومت ختم ہوئی تو تجارتی خسارہ انتہائی حدوں کو چھو رہا تھا، مالیاتی خسارہ خطرناک حد تک بڑھ چکا تھا۔

، ملک میں غیرملکی سرمایہ کاری بے تحاشہ حد تک گر چکی تھی، قرض میں کئی گنا اضافہ ہو چکا تھا،تحریک انصاف کی 8ماہ کی حکومت کو مسائل کا ذمے دار نہیں ٹھہرایا جا سکتا۔انہوں نے کہاکہ سابق وزیر خزانہ اسحٰق ڈار نے ڈالر کو مصنوعی طور پر فریز کیا ہوا تھا اور روپے کو استحکام دینے کے لیے وہ ڈالر مارکیٹ میں پھینکتے تھے، جب تحریک انصاف کی حکومت آئی تو فاریکس ریزرو صرف 2ہفتے کے رہ چکے تھے اور اس بگڑی ہوئی صورتحال سے تحریک انصاف کو دوچار ہونا پڑا اور ہم انہیں درست کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

اعجاز چودھری

مزید : میٹروپولیٹن 1