کرپٹ افسران ‘ ملازمین کو فوری طور پر گندم خریداری مہم سے الگ کرنیکا فیصلہ

کرپٹ افسران ‘ ملازمین کو فوری طور پر گندم خریداری مہم سے الگ کرنیکا فیصلہ

ملتان (سپیشل رپورٹر) وزارت خوراک پنجاب میں تعینات ہونے والے صوبائی سیکرٹری خوراک پنجاب نسیم صادق نے چارج سنبھالتے ہی محکمہ خوراک میں بری شہرت کے حامل کرپٹ افسران و ملازمین کو گندم خریداری کے عمل سے فوری طور پر الگ کرنے کا فیصلہ کیا ہے ذرائع کے مطابق محکمہ خوراک پنجاب کے سیکرٹری خوراک نسیم صادق نے فصل گندم خرایداری سیزن 2019-20ء کو صاف شفاف (بقیہ نمبر15صفحہ12پر )

بنانے کے لئے محکمہ میں تمام بدنام افسران کو کوئی ذمہ داری نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے انہوں نے ایڈمن برانچ کو حکم دیا ہے کہ جن افسران کے خلاف انٹی کرپشن،نیب یاکسی بھی عدالت میں کوئی مقدمات چلے رہے ہیں ان کی فوری فہرستیں تیار کی جائیں ان کو حالیہ گندم خریداری سے الگ کیا جائے ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ صوبے بھر میں 9ڈی ایف سی اور 3ڈپٹی ڈائریکڑ فوڈ ز کے انٹی کرپشن میں مقدمات چلے رہے ہیں اسی طرح درجنوں فوڈ انسپکٹرز کو بھی اچھی شہرت نہ ہونے کی وجہ سے خریداری سے دور رکھا جائیگا انہوں نے سخت احکامات جاری کئے ہیں کہ تمام فیلڈ افسران کو دوبارہ ان کی کارکردگی کی بنیاد پر تعینات کیا جائے گا اس طرح آئندہ چند روز میں وسیع پیمانے پر تبدیلیاں متوقع ہیں سفارشی افسران کو فیلڈ میں تعینات نہیں کیا جائیگا ان کو ہیڈ آفس میں ذمہ داریاں سونپی جارہی ہیں اس سلسلے میں جنگی بنیادوں پر کام شروع کردیا گیا ہے

کرپٹ افسران

مزید : ملتان صفحہ آخر