کرونا نے مزید 22افراد کی جان لے لی، یورپ میں ہلاکتوں کی تعداد ایک لاکھ سے تجاوز کر گئی، امریکہ کی 3ریاستوں میں لاک ڈاؤن نرم کرنے کا اعلان، تائیوان کے تین نیوی اہلکاروں میں کرونا وائرس کی تصدیق کے بعد 700اہلکار قرنطینہ منتقل

    کرونا نے مزید 22افراد کی جان لے لی، یورپ میں ہلاکتوں کی تعداد ایک لاکھ سے ...

  

کراچی، پشاور،لاہور، مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)پاکستان میں کرونا سے مزید 22 افراد جاں بحق ہو گئے جس کے بعد ہلاکتیں 167 اور مریضوں کی تعداد 8219 ہوگئی خیبرپختونخوا میں 10، سندھ میں 8 اور پنجاب میں 4 افراد جاں بحق ہوئے، ملک میں 478 نئے کیسز کی تصدیق ہوئیخیبرپختونخوا کے وزیر صحت تیمور خان جھگڑا نے ٹوئٹ کرتے ہوئے بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران صوبے میں مزید 10 افراد مہلک وائرس کا شکار بن گئے۔انہوں نے کہا کہ پشاور اور سوات میں 4، 4 جبکہ مردان اور ایبٹ آد میں ایک ایک ہلاکت ہوئی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ صوبے میں مہلک وائرس سے اموات 60 تک جاپہنچی ہے جو اب تک ملک کے کسی بھی صوبے میں سب سے زیادہ تعداد ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے ویڈیو پیغام میں بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس سے مزید 8 افراد کا انتقال ہوا ہے جس کے بعد صوبے جاں بحق افراد کی تعداد 56 ہوگئی ہے۔صوبہ سندھ مہلک وائرس سے ہونے والی ہلاکتوں میں دوسرے نمبر پر ہے۔اس کے علاوہ وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے بھی صوبے میں کورونا وائرس سے مزید 4 افراد کی ہلاکت کی تصدیق کی۔ان کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں مہلک وائرس سے ہلاک افراد کی تعداد 41 ہوگئی ہے۔ملک میں مزید 22 افراد کے جاں بحق ہونے کے بعد ہلاکتوں کی تعداد 167 تک جاپہنچی ہے جس میں سے خیبرپختونخوا میں 60، سندھ میں 56، پنجاب میں 41، بلوچستان میں 5، گلگت میں 3 اور اسلام ا?باد میں 2 افراد کا انتقال ہوا ہے۔پنجاب میں اتوار کو مزید 4 افراد کورونا کا شکار ہوئے جس کے بعد صوبے میں اموات کی تعداد 41 تک جاپہنچی ہے جبکہ مزید 357کیسز کی تصدیق ہوئی جس کے بعد متاثرہ افراد کی تعداد 3686 ہوگئی۔ترجمان پرونشل ڈیزاسٹر منیجمنٹ اتھارٹی (پی ڈی ایم اے) کے مطابق صوبے میں اب تک کورونا سے 702 افراد صحت یاب ہوچکے ہیں۔سندھ میں مزید 8 افراد مہلک وائرس کے باعث جان کی بازی ہارگئے ہیں جس کی تصدیق وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کی۔ مزید ہلاکتوں کے بعد صوبے میں کورونا سے جاں بحق افراد کی تعداد 56 ہو گئی ہے۔سندھ حکومت کے ترجمان مرتضیٰ وہاب نے بتایا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران مزید 182 افراد میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی ہے جس کے بعد متاثرہ مریضوں کی تعداد 2537 ہو گئی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران 33 افراد صحت یاب ہو چکے ہیں جس کے بعد صحت یاب افراد کی تعداد 625 ہوگئی ہے۔خیبر پختونخوا میں کورونا کے 60 نئے کیسز اور 10 ہلاکتیں رپورٹ ہوئیں جس کے بعد صوبے میں مریضوں کی تعداد 1137 اور اموات کی مجموعی تعداد 60 تک پہنچ گئی ہے۔محکمہ صحت کے پی کے مطابق صوبے میں کورونا سے متاثرہ 226 افراد صحت یاب ہوچکے ہیں۔صوبے میں ہفتے کو کورونا وائرس کے مزید 25 کیسز سامنے آئے جس کی تصدیق صوبائی ترجمان لیاقت شاہوانی نے کی تھی۔لیاقت شاہوانی کے مطابق صوبے میں متاثرہ مریضوں کی مجموعی تعداد 376 ہوگئی ہے جن میں سے اب تک مقامی طور پر 229 افراد وائرس سے متاثر ہوئے جب کہ 145 ایران سے آئے۔وفاقی دارالحکومت میں مزید 8 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ہے جس کے بعد اسلام ا?باد میں مریضوں کی تعداد 171 ہو گئی ہے جب کہ شہر اقتدار میں کورونا سے اب تک 2 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔ڈپٹی کمشنر اسلام آباد کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے ایک 72 سالہ ڈاکٹر جاں بحق ہوگیا ہے جو اسلام ا?باد میں دوسری ہلاکت ہے۔گلگت بلتستان میں اتوار کو مزید 6 افراد میں مہلک وائرس کی تصدیق ہوئی جس کے بعد متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 263 ہو گئی جب کہ اب تک 194 افراد صحت یاب بھی ہو چکے ہیں۔محکمہ صحت کے مطابق گلگت میں زیر علاج کیسز کی مجموعی تعداد 66 رہ گئی ہے اور صحت یابی کا تناسب 73 فیصد سے زائد ہے۔گلگت بلتستان میں اب تک کورونا وائرس سے 3 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں جن میں وائرس کی تشخیص کرنے والے ڈاکٹر اسامہ بھی شامل ہیں۔آزاد کشمیر میں بھی اتوار کو ایک شخص میں کورونا وائرس کی تشخیص ہوئی جس کے بعد متاثرہ افراد کی تعداد 49 ہوگئی ہے۔

پاکستان ہلاکتیں

نیویارک، لندن،برلن،(مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں) کورونا وائرس سے دنیا بھر میں مرنے والوں کی تعداد ایک لاکھ 60 ہزار 770 ہو گئی، متاثرہ افراد کی تعداد 23 لاکھ 32 ہزار تک پہنچ گئی۔ برطانیہ میں 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس سے مزید 596 افراد ہلاک ہو چکے ہیں جس کے بعد ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 16,060 ہو گئی ہے، فرانس میں مزید 642، اسپین میں 637 اور اٹلی میں 482 ہلاکتیں ہوگئیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق برطانیہ میں کورونا وائرس کے مزید پانچ ہزار آٹھ سو بچاس کیسز سامنے آئے ہیں جس کے بعد ملک میں کیسز کی کل تعداد 1,20,067 ہو گئی ہے۔امریکہ کورونا سے سب سے زیادہ متاثر ہے جہاں چوبیس گھنٹوں میں ایک ہزار 760 سے زائد افراد موت کے منہ میں چلے گئے ہیں اور ہلاکتوں کی مجموعی تعداد 39 ہزار سے بڑھ چکی ہے۔امریکہ کورونا سے متاثر ہونے والوں کی تعداد سات لاکھ 38 ہزار سے بڑھ گئی ہے، نیویارک کے بعد نیوجرسی کورونا وائرس کا گڑھ بن گئی ہے۔نیویارک میں اب تک کورونا سے دو لاکھ تینتیس ہزار سے زائد افراد بیمار اور سترہ ہزار سے زائد ہلاکتیں ہو چکی ہیں۔اسپین میں کورونا کے سبب بیس ہزار سے چھ سو سے زائد افراد ہلاک ہو چکے ہیں اور ایک لاکھ چوروانوے ہزار سے زائد افراد وائرس سے متاثر ہیں۔برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو، ساؤ پاؤلو اور دارالحکومت براسیلیا میں گورنرز سے لاک ڈاؤن اقدامات پر مستعفی ہونے کا مطالبہ کرتے ہوئے سیکڑوں ٹرک، گاڑیاں اور موٹر سائیکل سوار سڑکوں پر آگئے۔ریاست کے ایک قانون ساز اینڈرسن مورائس نے ریو کے شہریوں کو احتجاج میں شرکت کرنے کی دعوت دیتے ہوئے کہا کہ 'زندگیاں اہم ہیں تاہم ہم آج کوئی بھی فیصلہ کل کا سوچے بغیر نہیں لے سکتے کیونکہ کل مجھے نہیں معلوم کہ کسی بھی شخص کی حالت کیا ہوگی جب وہ اپنے بچوں کو بھوکا دیکھے گا'۔۔فرانس مزید 642 ہلاکتوں سے تعداد 19 ہزار 323 ہو گئی، اسپین مزید 637 ہلاکتوں سے تعداد 20 ہزار 639 ہو گئی، اٹلی میں مزید 482 ہلاکتیں ہوئیں، کل تعداد23 ہزار 227 ہو گئی۔ترکی میں مزید ایک 121 افراد ہلاک ہوئے، تعداد 1890 ہو گئی۔ کینیڈا میں مزید 160، ہالینڈ142، جرمنی میں 125، ایران میں 73 بھارت میں 35 اموات ہوئیں۔ادھر اٹلی، اسپین، جرمنی سمیت دیگر یورپی ممالک میں کورونا وائرس سے ہلاکتوں میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے جہاں اموات کی تعداد ایک لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے۔اسپین میں متاثرین کی تعداد ایک لاکھ 94 ہزار 416 جب کہ ہلاکتوں کی تعداد 20 ہزار 639 ہے، اسی طرح اٹلی میں اموات کی تعداد 23 ہزار 227 اور متاثرین کی کل تعداد ایک لاکھ 75 ہزار 925 ہے۔فرانس میں اب تک 19 ہزار 323 افراد لقمہ اجل بن گئے ہیں اور جرمنی میں ساڑھے چار ہزار سے زائد افراد انتقال کر چکے ہیں جب کہ دونوں ممالک مریضوں کی تعدادایک ایک لاکھ سے زائد ہو چکی ہے۔برطانیہ میں وائرس نے عوام کی زندگی اجیرن بنا دی ہے جہاں بیماروں کی تعداد 1 لاکھ 14 ہزار 217 ہے جب کہ اموات 15 ہزار سے اوپر جا چکی ہے۔دوسری جانب ترکی نے اپنے پڑوسی ملک ایران کو کورونا وائرس کے کیسز میں پیچھے چھوڑ دیا ہے، ترکی میں اب 82 ہزار 329 مصدقہ کیسز ہو چکے ہیں جب کہ ایران میں مریضوں کی تعداد 80 ہزار 868 ہے۔ وائرس کے ابتدائی ملک چین نے سر توڑ حفاظتی اقدامات کرتے ہوئے اس پر قابو پالیا ہے اور اب وہاں معمولات زندگی بھی بحال ہو رہے ہیں۔چین میں اب کورونا وائرس کے کیسز کی تعداد 82 ہزار 735 ہے جب کہ ہلاکتیں 4 ہزار 632 ہیں۔دنیا بھر میں ہلاک افراد کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 61 ہزار 191 ہے جب کہ 23 لاکھ 44 ہزار 969 مریضوں میں سے 6 لاکھ سے زائد افراد شفا یاب بھی ہو چکے ہیں۔بحر الکاہل کے جزیرہ نما ریاست پلاؤ میں خیر سگالی کے مشن پر جانے والے نیوی اہلکاروں میں سے 3 میں کورونا وائرس کی تصدیق کے بعد تائیوان کی حکومت نے 700 اہلکاروں کو قرنطینہ میں منتقل کرنے کا فیصلہ کرلیا۔ڈان اخبار کی رپورٹ کے مطابق وزیر صحت چن شی چن چنگ نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تائیوان کی بحریہ کے 3 جہازوں نے باضابطہ سفارتی تعلقات برقرار رکھنے کے لیے پلاؤ کا دورہ کیا تھا۔انہوں نے بتایا کہ 15 مارچ کو جہاز دورے پر روانہ ہوئے تھے تاہم 15 ممالک میں سے صرف ایک ریاست پلاؤ کا دورہ کرکے وہ واپس آگئے تھے۔انہوں نے بتایا کہ تصدیق شدہ تینوں کیسز ایک ہی جہاز میں ایک کوارٹرز میں رہے تھے تاہم تینوں جہازوں پر موجود تمام 700 اہلکاروں کو دوبارہ بلایا گیا ہے اور انہیں قرنطینہ میں ڈال دیا جائے گا۔ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 3 ریاستوں کے لاک ڈاؤن میں نرمی کا اعلان کر دیا۔غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق امریکی صدر نے ٹیکساس اور ورمونٹ میں پیرسے جبکہ مونٹانا میں جمعہ سے کاروبار کھولنے کی ہدایت کر دی۔ٹیکساس میں ایک احتجاجی ریلی نکالی گئی جس میں زیادہ تر صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی شامل تھے۔ وہ دفاتر اور روزگار کے مقامات کو کھولنے کا مطالبہ کر رہے تھے۔۔ہمسایہ ریاست نیو جرسی کے ہیلتھ کمشنر نے کہا کہ صحت عامہ کی تنصیبات میں ہلاکتوں کی تعداد 40 فی صد کی شرح سے بڑھ رہی ہے۔۔جنوبی کوریا میں فروری میں وبا کے عروج پر پہنچنے کے بعد پہلی مرتبہ ایک روز میں سامنے آنے والے نئے کیسز کی تعداد میں واضح کمی رپورٹ ہوئی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ 'نئے 8 میں سے 5 کیسز بیرون ملک سے آئے تھے'۔ملک میں کورونا کیسز کی مجموعی تعداد 10 ہزار 661 ہے اور اب تک اس وائرس سے وہاں 234 ہلاکتیں بھی ہوچکی ہیں۔پاناما کے حکام نے امریکا کی جانب جانے والے 1700 مہاجرین کو جنگل کے ایک کیمپ میں رہنے کا حکم دے دیا۔سرکاری ذرائع کے مطابق ان تمام مہاجرین میں سے چند میں نئے کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی تھی۔انہیں کولمبیا کی سرحد کے پاس قرنطینہ مرکز میں رکھا گیا ہے جو 200 افراد کو رکھنے کے لیے بنایا گیا تھا۔پاناما میں کورونا وائرس کے کیسز کی مجموعی تعداد 4 ہزار 273 ہوگئی ہے جبکہ 120 افراد ہلاک بھی ہوچکے ہیں۔اسرائیل میں کورونا وائرس سے مزید 7 افراد کی ہلاکت کے بعد ہلاکتوں کی تعداد 171 ہوگئی ہے۔ملک کے وزارت صحت کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران اسرائیل میں 97 نئے کیسز سامنے آئے جس کے بعد مجموعی تعداد 133 ہزار 362 ہوگئی جن میں سے 156 کی حالت تشویشناک ہے۔روس میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 6 ہزار 60 نئے کیسز رپورٹ ہوئے جس کے بعد ملک میں مجموعی تعداد 42 ہزار 853 ہوگئیسپین، جو کہ کروناوائرس کی عالمی وباء سے شدید متاثرہ ممالک میں سے ایک ہے، قومی لاک ڈاون میں 9مئی تک توسیع کررہا ہے، یہ اعلان وزیراعظم پیڈرو سانچیز نے گزشتہ روز کیا۔ انھوں نے مزید کہا کہ تاہم 27اپریل کو نقل وحرکت پر عائد پابندیاں نرم کی جائیں گی تاکہ بچوں کو باہر نکلنے کا وقت دیا جاسکے۔

عالمی کرونا

مزید :

صفحہ اول -