یوکرینی گندم کی مسلسل برآمد کے باوجود نرخوں میں اضافہ

یوکرینی گندم کی مسلسل برآمد کے باوجود نرخوں میں اضافہ

  

کیف (اے پی پی) یوکرین کی گندم کی مسلسل برآمد کے باوجود اس کے نرخوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے، سیزن کے دوران 18 ملین ٹن ایکسپورٹ کرنے کے باوجود 2 ملین ٹن کا ذخیرہ موجود ہے۔مقامی کنسلٹنسی گروپ اے پی کے انفارم کے مطابق سیزن 2019-20 ء کے دوران اب تک یوکرین 18 ملین ٹن گندم برآمد کرچکا ہے جبکہ جون کے آخر تک مزید برآمدی ضروریات کے لیے 2 ملین ٹن کا سٹاک اب بھی موجود ہے۔انھوں نے بتایا کہ بڑے پیمانے پر برآمد کے باوجود یوکرینی گندم کے نرخوں میں اضافہ دیکھنے میں آرہا ہے جو اب تک سیزن کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکی ہے،گزشتہ روز بحیرہ اسود کے علاقے کی 12.5 فیصد پروٹین کی حامل گندم کے سودے 227-232 ڈالر فی ٹن فری آف بورڈ کی بنیاد پر ہوئے، یہ گندم اپریل کے آخر میں برآمدکردی جائے گی۔اس سے قبل جنوری کے آخر مین سب سے زیادہ نرخ سامنے آئے تھے جو 226-231 ڈالر فی ٹن فری آف بورڈ کی بنیاد پر تھے۔گروپ کا کہنا ہے کہ یوکرینی گندم کے نرخوں میں اضافہ اس کی زیادہ طلب کے باعث ہیں۔

مزید :

کامرس -