حکومت کا شرح سود میں کمی کا فیصلہ خوش آئند: پیاف

حکومت کا شرح سود میں کمی کا فیصلہ خوش آئند: پیاف

  

لاہور(کامرس ڈیسک)پاکستان انڈسٹریل اینڈ ٹریڈرز ایسوسی ایشنز فرنٹ (پیاف) نے کہا ہے کہ شرح سود میں کمی خوش آئند ہے مگر موجودہ حالات کو دیکھتے ہوئے شرح سود کم از کم 5 فیصد تک لائی جائے تاکہ معاشی ست روی میں بہتری آئے اور معاشی پہیہ کو چلانے میں مدد ملے۔اسٹیٹ بینک نے پچھلے ۱ ماہ کے دوران شرح سود کو 3 بار کم کرتے ہوئے اسے ۹ فیصد تک لے آئی ہے۔ مانیٹری پالیسی کے آئندہ اجلاس میں شرح سود کو مزید کم کرنے پر غور کیا جائے۔دنیا کے ترقی یافتہ ممالک میں کرونا وائرس کے باعث شرح سود زیرو فیصد پر آگئی ہے۔ 9 فیصد شرح موجودہ حالات کو دیکھتے ہوئے زیادہ ہے شرح سود کو ا ٓخری حد تک کم کیا جائے تاکہ گرتی ہوئی برآمدات میں اضافہ ہوں اور ایکسپورٹرز کو نئے آڈرز مل سکیں۔کرونا وبا سے پاکستانی برآمدات بری طرح متاثر ہوئی ہیں۔ شپمنٹس رک گئی ہیں اور مال گوداموں میں پڑا ہے۔پاکستان میں بھی کاروبار وصنعت وتجارت کو تباہی سے بچانے کے لئے شرح سود کو مزید کم کیا جائے۔ تجارت بحال ہونے اور صنعتوں کا پہیہ چلنے سے ہم عالمی مارکیٹ میں مسابقت کر سکیں گے۔چیئرمین پیاف میاں نعمان کبیر نے سیئنر وائس چیئرمین ناصر حمید خان اور وائس چیئرمین جاوید اقبال صدیقی کے ہمراہ حکومت سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ شرح سود کو بتد ریج کم کیا جائے تاکہ سستے قرضے ملنے سے کاروباری سرگرمیوں میں تیزی آئے اور معیشت جلد بحالی کی جانب گامزن ہو۔

مزید :

کامرس -