مساجد کے آئمہ کیخلاف درج مقدمات فی الفور واپس لئے جائیں: علماء مشائخ

مساجد کے آئمہ کیخلاف درج مقدمات فی الفور واپس لئے جائیں: علماء مشائخ

  

کراچی(اسٹاف رپورٹر)امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان کا ماڑی پور جاوید بحریہ سوسائٹی میں میگا راشن سینٹر کا افتتاح، راشن سینٹر سے کراچی کی ساحلی پٹی پر آباد گوٹھوں میں مقیم مزدور پیشہ مستحق افراد کے لئے راشن کی پیکنگ اور تقسیم کی جائیگی۔راشن سینٹر کے افتتاح کے موقع پر امیر جماعت اسلامی نے مقامی ذمہ داران اور الخدمت کے رضاکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کورونا وائرس کی وبا نے خدا سے بے زار معاشرے کو خدا کی جانب راغب کردیا ہے۔چھوٹے سے وائرس نے بڑی بڑی معاشی طاقتوں کی ٹیکنا لوجی اور طاقت کے غرور کو خاک میں ملا دیا ہے۔دنیا بھر میں افراتفری کے ماحول میں بھی اسلامی دنیا وائرس کا مقابلہ عزم و ہمت سے کررہی ہے۔مغربی معاشرے میں جہاں سپر اسٹور خالی ہو گئے ہیں وہاں امت مسلمہ کے دل کراچی میں گلی گلی راشن کی تقسیم جارہی ہے۔خوف کے ساتھ کورونا کی وبا سے مقابلہ نہیں کیا جاسکتا۔احتیاطی تدابیر اور ایمان کی طاقت سے کورونا کو شکست دی جاسکتی ہے۔اس موقع پر امیر جماعت اسلامی ضلع غربی محمد اسحاق خان،نائب امیر فضل احد،ناظم علاقہ محمد حسین اور مسعود اشرف بھی موجود تھے۔ محمد اسحاق خان نے کہا کہ الخدمت کراچی بھر میں متاثرین میں تیار کھانا راشن اور ضروریات زندگی کی بنیادی اشیاء پہنچارہی ہے۔الخدمت رضاکار فرنٹ لائن سپاہی کا کردار ادا کررہے ہیں۔لاک ڈاؤن کے 14دن گزرنے کے باجود حکومت اب تک غریب تک راشن پہنچانے میں ناکام ہو گئی ہے۔روز مرہ کام کرنے والے مزدوروں کا واحد سہارا الخدمت و دیگر رفاہی ادارے ہیں۔حکومت نے اب تک غریب کو گھر کی دہلیز تک راشن پہنچانے کے لئے کوئی جامع حکمت عملی مرتب نہیں کی۔غریب مارے مارے پہر رہے ہیں۔انہوں نے مطالبہ کیا کہ حکومت فی الفور غریب گھرانوں کو گھر کی دہلیز پر راشن کی فراہمی یقینی بنائے۔حافظ نعیم الرحمان نے کہا کہ انہوں نے مزید کہا کہ لاک ڈاؤن میں سب سے زیادہ روزانہ اجرت پر کام کرنے والے متاثر ہوئے ہیں۔حکومت کی جانب سے اب تک فنڈ جاری کرنے کے اعلانات کے علاوہ کوئی خاطر خواہ اقدامات نہیں اٹھائے گئے۔الخدمت فاؤنڈیشن سمیت دیگر رفاہی ادارے مشکل کی اس گھڑی میں عوام کے لئے امید کی کرن ہیں۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -