کورونا وائرس سے جنگ، جنوبی کوریا نے ایسا کام کر دکھایا کہ پوری دنیا کو شرمندہ کر دیا

کورونا وائرس سے جنگ، جنوبی کوریا نے ایسا کام کر دکھایا کہ پوری دنیا کو شرمندہ ...
کورونا وائرس سے جنگ، جنوبی کوریا نے ایسا کام کر دکھایا کہ پوری دنیا کو شرمندہ کر دیا

  

سیئول(مانیٹرنگ ڈیسک) پوری دنیا کورونا وائرس کے خلاف جنگ لڑرہی ہے مگر اکثر ملک اس میں کسی نہ کسی حد تک ناکام ثابت ہو رہے ہیں مگر اس جنگ میں جنوبی کوریا نے ایسا کام کر دکھایا ہے کہ پوری دنیا کو شرمندہ کر دیا۔ میل آن لائن کے مطابق جنوبی کوریا ان ابتدائی ممالک میں سے ایک ہے جہاں چین سے کورونا وائرس منتقل ہوا لیکن جنوبی کوریا نے اس کا پھیلاﺅ روکنے کے لیے ایسے شاندار اقدامات کیے کہ اب وہاں نئے مریض کی شرح کم ہوتے ہوتے عدد واحد میں داخل ہو گئی۔ گزشتہ روز پہلا دن تھا جب جنوبی کوریا میں صرف 8نئے مریض سامنے آئے۔ اس دو ماہ سے زائد عرصے میں جنوبی کوریا میں کیسز کی تعداد صرف 10ہزار 661تک پہنچی اور 234اموات ہوئیں۔

رپورٹ کے مطابق جنوبی کوریا میں اب تک 8ہزار 42مریض صحت یاب ہو کر گھروں کو واپس جا چکے ہیں۔ جنوبی کوریا کے صدر مونگ جے ان کا کہنا ہے کہ ”ہمیں اس وقت تک کمر ڈھیلی نہیں کرنی ہے جب تک کورونا وائرس کا آخری مریض صحت مند ہو کر گھر واپس نہیں چلا جاتا۔ تب تک ہم اس وباءکے خلاف جنگ میں ڈٹے رہیں گے۔“رپورٹ کے مطابق فروری اور مارچ میں جنوبی کوریا میں روزانہ سینکڑوں نئے مریض سامنے آ رہے تھے، اب چند مریض سامنے آ رہے ہیں۔ اس کے باوجود جنوبی کورین حکام اپنے عوام کو متنبہ کر رہے ہیں کہ اگر انہوں نے سماجی میل جول میں فاصلے کی پابندی کی خلاف ورزی کی تو وائرس کے پھیلاﺅ کی شرح ایک بار پھر بڑھ سکتی ہے اور یہ خاموش پھیلاﺅ ہو گا جسے روکنا بہت مشکل ہو گا۔صدر مونگ نے اپنے عوام کو تاکید کی کہ وہ وائرس کا پھیلاﺅ روکنے میں حکومت کی بھرپور مدد کریں تاکہ لوگوں کی نوکریاں کم سے کم ضائع ہوں اور ملکی معیشت جلد واپس اپنی ڈگر پر لائی جا سکے۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -