کیا وٹامن ڈی کے ذریعے کورونا وائرس کا مقابلہ ممکن ہے؟ سائنس کی دنیا سے انتہائی اہم خبر آ گئی

کیا وٹامن ڈی کے ذریعے کورونا وائرس کا مقابلہ ممکن ہے؟ سائنس کی دنیا سے ...
کیا وٹامن ڈی کے ذریعے کورونا وائرس کا مقابلہ ممکن ہے؟ سائنس کی دنیا سے انتہائی اہم خبر آ گئی

  

میڈرڈ(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کے مقابلے کے لیے سائنس کی دنیا سے ایک اہم خبر آ گئی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق سائنسدانوں نے امکان ظاہر کیا ہے کہ وٹامن ڈی سے ممکنہ طور پر کورونا وائرس کا مقابلہ کیا جا سکتا ہے۔ حال ہی میں ٹرینٹی کالج ڈبلن کے سائنسدانوں نے ایک تحقیق کی ، جس کے نتائج میں معلوم ہوا کہ لوگوں کو وٹامن ڈی کے سپلیمنٹس دینے سے ان میں سینے کی انفیکشنز میں 50فیصد کمی واقع ہوئی۔ اس تحقیق کے نتائج کے بعد سپین میں سائنسدانوں نے کورونا وائرس کے مریضوں پر اس کے تجربات کرنے شروع کر دیئے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق سپین کی یونیورسٹی آف گرانڈا کے سائنسدان اس تحقیق میں کورونا وائرس کے مریضوں کو وٹامن ڈی کے سپلیمنٹس دے رہے ہیں۔ اس تحقیق کا دورانیہ 10ہفتے کا ہے۔ اس دوران درجنوں مریضوں پر تجربات کیے جائیں گے اور پھر نتائج منظرعام پر لائے جائیں گے۔ اس معاملے پر یونیورسٹی آف سسیکس کی ماہر ڈاکٹر جینا میشوشی نے اظہار خیال کرتے ہوئے بتایا کہ ”اگر کسی میں وٹامن ڈی کی کمی ہو تو اسے سردی لگنے اور سینے کی انفیکشنز ہونے کا خطرہ تین سے چار گنا بڑھ جاتا ہے۔ چنانچہ یہ مفروضہ قرین قیاس ہے کہ لوگوں میں وٹامن ڈی کی کمی پوری کرکے کورونا وائرس کی انفیکشن سے مقابلہ کیا جا سکتا ہے۔“

مزید :

تعلیم و صحت -