شادی کے خواہشمند حضرات یہ عادات چھوڑ دیں

شادی کے خواہشمند حضرات یہ عادات چھوڑ دیں
شادی کے خواہشمند حضرات یہ عادات چھوڑ دیں

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

سڈنی ( نیوزڈیسک ) دوسروں کے لئے اپنی شخصیت کو جاذب نظر بنانے کا واحد ذریعہ صرف جسمانی خوبصورتی ہی نہیں، بلکہ ہماری عادات کا بھی اس میں بڑا عمل دخل ہوتا ہے۔ تو یہاں ہم آپ کو ایسی بری عادات کے متعلق آگاہی دیں گے، جو لاشعوری طور پر اکثر نوجوانوں میں موجود ہوتی ہے اور ان سے جان چھڑانا ضروری ہے۔
گندے کپڑوں کو سمیٹنا: صبح ہائی سکول جانے سے قبل جب کپڑے تبدیل کئے جاتے ہیں، تو اکثر طالب علم اپنے کمرے میں انہیں ادھر ادھر پھینک کر نکل جاتے ہیں۔ سکول جانے کے بعد اگر کوئی آپ کے کمرے میں آئے، خصوصاً کوئی لڑکی آئے تو بکھرے ہوئے گندے کپڑے دیکھ کر وہ آپ کی شخصیت کا منفی تاثر لے گی۔ لہذا کپڑے تبدیل کرنے کے بعد انہیں اس مقصد کے لئے مختص جگہ پر سنبھال کر رکھیں۔
ہرویک اینڈ(ہفتہ کی رات) پر گیمز کھیلنا: تفریح کے لئے گیمز کھیلنا کوئی بری بات نہیں، لیکن اگر اسے باقاعدہ ہر ویک اینڈ کے لئے طے کر لیا جائے تو اس کا منفی اثر پڑ سکتا ہے، لہذا کسی ویک اینڈ پر سکون سے بیٹھ کر زندگی کا جائزہ بھی لیں، تاکہ بہتر مستقبل کے منصوبہ بندی کی جا سکے۔
مصنوعی صفائی: صفائی کے لئے مصنوعی طریقے یعنی خوشبودار سپرے استعمال کرنے کے بجائے بذات خود اپنے کمرے، بیڈ شیٹ اور میز، کرسیوں کی صفائی کی عادت اپنائیں۔ بغیر دھلے کپڑے پہن کر ان پر پرفیوم لگا لینے سے صفائی نہیں ہو سکتی۔

حفظان صحت: حفظان صحت کے اصولوں کا خصوصی خیال رکھیں، کیوں کہ اگر آپ کے جسم یا کمرے سے بدبو کے بھبھوکے اٹھ رہے ہوں تو ہو سکتا ہے کہ شرم کے مارے آپ کے منہ پر کوئی دوسرا کچھ نہ کہے، لیکن اس سے آپ کی شخصیت کا منفی تاثر ضرور ابھرے گا۔ لہذا صحت و صفائی کا خصوصی خیال رکھیں۔

تیارشدہ کھانے: تیار شدہ کھانوں کے بجائے خود سے کھانا بنانے کی عادت ڈالیں، کیوں کہ خالی پیزا باکس، گندی پلیٹیں اور بچا کھچا کھانا کسی کو بھی اچھا نہیں لگتا۔
ان کے علاوہ وقت پر بھرپور نیند نہ لینا، ٹائلٹ کا غلط استعمال اور اس میں گندگی کا جما رہنا، بغیر استری کے کپڑے پہننا، پانی پینے کے لئے گلاس کے بجائے بوتل کا استعمال اور ہاسٹل یا گھر کے کمرے میں مختلف پوسٹرز اور سٹکرز چپکانے کی عادات آپ کی شخصیت کا منفی تاثر پیدا کرتی ہیں، لہذا ان سے نجات ضروری ہے۔

مزید :

تعلیم و صحت -