بینظیرانکم سپورٹ پروگرام کے دفاتر کی منتقلی نے مستحقین کو مشکل میں ڈال دیا

بینظیرانکم سپورٹ پروگرام کے دفاتر کی منتقلی نے مستحقین کو مشکل میں ڈال دیا

ملتان( نیوز رپورٹر) بینظیرانکم سپورٹ پروگرام بی آئی ایس پی کے گلگشت اور معصوم شاہ روڈ کے دفاتر جنرل بس سٹینڈ وہاڑی روڈ منتقل کرنے کے باعث دور دراز کے رہائش پذیر رجسٹرڈ خاندانوں کو شدید دشواری اور اذیت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ علاوہ ازیں دو دفاتر کو ایک ہی بلڈنگ میں ضم کرنے (بقیہ نمبر38صفحہ12پر )

کیوجہ سے گلگشت اور معصوم شاہ روڈ کے قرب وجوار میں خواتین کو بھی اس غیر آباد علاقہ میں دھکے کھانے پر مجبور کر دیا گیاہے ۔ مذکورہ دفاتر وہاڑی روڈ پر منتقل کرنے کیوجہ سے شیر شاہ ‘ مظفر آباد ‘ نادر آباد ‘ قاسم بیلہ ‘ گارڈن ٹاؤن ‘ موضع لنگڑیال ‘ نواب پور ‘ موضع بچ اور سلطان پور ہمڑ سمیت دیگر علاقوں کی رجسٹرڈ خواتین کو مختلف مسائل کے حل کیلئے 10 سے 15 کلو میٹر کا سفر کر کے بی آئی ایس پی کے وہاڑی روڈ پر واقع دفتر آنا پڑتا ہے جس پر ٹرانسپورٹ پر اٹھنے والے اخراجات سمیت وقت کا بھی ضیاع ہوتا ہے بی آئی ایس پی میں رجسٹرڈ خواتین نے ادامہ کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ خواتین کو سہولیات کی فراہمی کے برعکس ملتان انتظامیہ نے دو مختلف علاقوں میں واقع دفاتر کو شہر کے آخری کونے میں ایک ہی بلڈنگ میں منتقل کر کے خواتین کے مسائل میں اضافہ کر دیا ہے جبکہ خواتین کے حقوق بارے مختلف دعوے کرنیوالی حکومت نے دفاتر مختلف علاقوں‘ میں مزید بنانے کی بجائے ایک ہی بلڈنگ میں منتقل کر کے ملتان انتظامیہ نے ثابت کیا ہے کہ انہیں خواتین کے حوالے سے بے حسی کا مظاہرہ کیا ہے انہوں نے وزیر اعظم سے مطالبہ کیا کہ بی آئی ایس پی کے دفاتر کو توسیع دی جائے تاکہ خواتین دوردراز کے سفر کی اذیت سے دوچار نہ ہوں ۔

مزید : ملتان صفحہ آخر