جنرل (ر) راحیل شریف کی قیادت میں تین سال کیلئے قومی نگرانی حکومت بنے گی: حیران کن دعویٰ منظرعام پر

جنرل (ر) راحیل شریف کی قیادت میں تین سال کیلئے قومی نگرانی حکومت بنے گی: حیران ...
 جنرل (ر) راحیل شریف کی قیادت میں تین سال کیلئے قومی نگرانی حکومت بنے گی: حیران کن دعویٰ منظرعام پر

  

لاہور (ویب ڈیسک) روزنامہ خبریں نے دعویٰ کیا ہے کہ سابق آرمی چیف جنرل (ر) راحیل شریف کی قیادت میں تین سال کیلئے پرانے سیاستدانوں، بیورو کریٹس اور ریٹائر ڈ جنرلز پر مشتمل قومی نگران حکومت بنا کر سب کا احتساب کرنے کا فیصلہ ہو چکا ہے ، آئندہ سال نہ ہی الیکشن ہونگے اور نہ ہی پارلیمانی نظام کے تحت کوئی حکومت ہو گی کیونکہ اب تمام قومی ادارے پاکستان کو کرپشن سے پاک پاکستان بنانے کیلئے سرتوڑ کوشش میں مصروف عمل ہو چکے ہیں اس لئے آئندہ ایسا پاکستان ہو گا جو کرپشن ، بدعنوانی ، سیاسی نا بالغی، لوٹ مار اور اقتدار کے لئے باریاں جیسی مہلک بیماریوں کا خاتمہ ہو گا اور ایسی شفاف حکومت بنائی جائیں گی جو پاکستان اور پاکستانی قوم کو دنیا میں ایسا مقام ملے جہاں دنیا کے فیصلے پاکستان میں ہوں۔

اخبار کے مطابق  مضبوط پاکستان کے قیام کیلئے پاور شیئر نگ کیلئے موجود ہ پارلیمانی نظام ختم اور نئے صدارتی نظام کی راہ ہموارکی جا رہی ہے جس کیلئے مسلم لیگ ن اور پیپلزپارٹی دونوں جماعتوں کے سوا نیا سیٹ اپ ہونے جا رہا ہے ایسے حالات میں ٹیکنو کریٹ ، سابق جرنیل اور معتبر سیاسی شخصیات جن میں عطاءالرحمن ، نثار میمن اور اس طرح کے دیگر صاف شفاف کردار کے مالک افراد کو پارلیمنٹ میں لانے کی تیاریاں کی جارہی ہیں جو ملک میں بے لاگ احتساب تک اپنے فرائض سرانجام دینگے۔

دوسری طرف مسلم لیگ ن کا کہناہے کہ یہ صرف افواہیں ہیں جو گردش کر رہی ہیں۔ راحیل شریف کچھ عرصے بعد اپنے گھر آتے ہیں اور ان کے ساتھ دو سعودی ہوتے ہیں اور بھی نجی دورے پر آئے ہیں اس کا قومی نگران حکومت بنانے کا کوئی تعلق نہیں، ان کے پاس پانچ سال کا کنٹریکٹ ہے۔ جس کے دوران وہ ایسا کوئی کام نہیں کرسکتے۔

مزید : لاہور