احتساب سے جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں،آرٹیکل 62 اور 63 سب پر لاگو ہونا چاہئے، سراج الحق

احتساب سے جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں،آرٹیکل 62 اور 63 سب پر لاگو ہونا چاہئے، ...
احتساب سے جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں،آرٹیکل 62 اور 63 سب پر لاگو ہونا چاہئے، سراج الحق

  

کوئٹہ (ڈیلی پاکستان آن لائن)امیر جماعت اسلامی سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ حساب کتاب سے جمہوریت کو کوئی خطرہ نہیں،آرٹیکل 62 اور 63 سب پر لاگو ہونا چاہئے اگر کوئی صادق و امین نہیں تو اسے اقتدار پر بیٹھنے کا کوئی حق نہیں، جماعت اسلامی سیاستدانوں سمیت سب کااحتساب چاہتی ہے اور کرپشن کے خلاف اپنی مہم جاری رکھیں گے ، جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا کہ دولت ملک سے لوٹ کربیرون ملک منتقل کی جاتی ہے اگر دولت لوٹنے والوں کو پکڑاجاتاہے تو کہاجاتاہے کہ جمہوریت کوخطرہ ہے اور ہم کسی ایسے ڈائیلاگ کو نہیں مانتے جو کرپشن کوتحفظ دیتاہواگر مذاکرات کرنا ہیں تو کرپشن کے خاتمے کےلئے کئے جائیں،امیر جماعت اسلامی نے کہا ہے کہ نواز شریف صاحب کو نااہل کیاگیاتو کہاگیا سب ادارے غلط ہیں، ہم اپنی احتساب سب کامہم کو آگے بڑھائیں گے اور آئین سے صادق اورامین کی شق کوختم نہیں کرنے دیں گے،انہوں نے کہا کہ کرپشن اورملک ساتھ ساتھ نہیں چل سکتاپہلے نظریاتی کرپشن کی وجہ سے پاکستان دو لخت ہواپھرنظریاتی کرپشن کی وجہ سے ملک صوبائیت میں تقسیم ہوااورنظریاتی کرپشن کی وجہ سے ملک سے سودی نظام ختم نہیں ہوا،امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ ملک کے عوام بے حال علاج اور روزگارسے بھی محروم ہے اورحکمرانوں کے کاروبار دن دگنی اور رات چوکنی ترقی کر رہے ہیں۔

مزید : کوئٹہ