پشاور میں ڈینگی پر قابو پانے کیلئے پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ پنجاب کا ایمبولینسز سمیت مزید امدادی سامان بھیجنے کا فیصلہ

پشاور میں ڈینگی پر قابو پانے کیلئے پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ ...
پشاور میں ڈینگی پر قابو پانے کیلئے پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ پنجاب کا ایمبولینسز سمیت مزید امدادی سامان بھیجنے کا فیصلہ

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) خیبر پختونخوا میں بڑھتے ہوئے ڈینگی کے مسئلے پر قابو پانے کیلئے حکومت پنجاب نے موبائل ہیلتھ یونٹس کے بعد  پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ کے ذریعے مزید امدادی سامان بھیجنے کا فیصلہ کیا ہے۔

ترجمان محکمہ صحت کے مطابق پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ ڈیپارٹمنٹ پنجاب ڈینگی کے مرض پر قابو پانے کیلئے ریسکیو 1122 کی جدید آلات کی حامل 8 ایمبولنسز پشاور بھجوائی جائیں گی۔ اس کے علاوہ 3 سی بی سی تجزیاتی مشینیں، ڈینگی کا ٹیسٹ کرنے والی کٹس اور مزید 2 موبائل ہیلتھ یونٹس بھی خیبر پختونخوا حکومت کی مدد کیلئے روانہ کیے جائیں گے۔

یہ بھی پڑھیں : ڈینگی پر بڑا بریک تھرو، کے پی حکومت پنجاب سے مدد لینے پر رضامند

واضح رہے کہ پنجاب کے صوبائی وزیر صحت خواجہ عمران نذیر پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کی ٹیموں اور تین موبائل یونٹس کے ساتھ پشاور میں موجود ہیں جہاں حکومت خیبر پختونخوا نے انہیں ہسپتالوںمیں کام کرنے کی اجازت دینے سے انکار کردیا تھا جس کے بعد انہوں نے سڑکوں پر ہی موبائل ہیلتھ یونٹس کے ذریعے مریضوں کو طبی امداد فراہم کرنا شروع کردی تھی۔ آج (اتوار کو) دوپہر 2 بجے کے قریب خیبر پختونخوا کی حکومت نے پنجاب سے مدد لینے پر رضا مندی ظاہر کردی ہے۔

مزید : لاہور