آئے کھایا پیا کچھ نہیں گلاس توڑااور چل دئیے،چودھری نثار خان نے ایک بار پھروہ حرکت کردی کہ ن لیگ کے مخالفین منہ ہی تکتے رہ گئے   

آئے کھایا پیا کچھ نہیں گلاس توڑااور چل دئیے،چودھری نثار خان نے ایک بار ...
 آئے کھایا پیا کچھ نہیں گلاس توڑااور چل دئیے،چودھری نثار خان نے ایک بار پھروہ حرکت کردی کہ ن لیگ کے مخالفین منہ ہی تکتے رہ گئے   

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن ) سینیٹر پرویز رشید کی جانب سے وزارت داخلہ اور چودھری نثار پر تنقید کے بعد چودھری نثار نے جوابی پریس کانفرنس کا اعلان کیا تو اس بارقوم اور میڈیا کا خیال تھا کہ وہ ن لیگ چھوڑنے کا اعلان اور کئی اہم انکشافات کریں گے لیکن انہوں نے حسب معمول اپنے دوروزارت میں اپنی کارکردگی کی وضاحت کرنے کے سوا کوئی ایسا معنی خیز نقطہ نہیں اٹھایا جس سے ن لیگ کے ٹوٹ جانے کے شوشوں میں انکے کردار کا تعین کیا جاسکتا ۔اس سے پہلے بھی انہوں نے پانامہ کیس کے دوران دو بار دھواں دارپریس کانفرنس کرنے کا اعلان کیا تھا لیکن انہوں نے سابقہ پریس کانفرنسوں میں کچھ کہنے سے اپنی معذوری کا اعلان کیا کہ دوستوں کے دباو ¿ کی وجہ سے وہ کچھ ایسی باتیں نہیں کرنا چاہتے جس سے میاں نواز شریف اور ن لیگ کو کوئی نقصان پہنچے ۔وزارت سے الگ ہونے اور میاں نواز شریف کی نااہلی کے بعد میڈیاکو بڑی توقع تھی کہ چودھری نثار ن لیگ کے تابوت میں آخری کیل ٹھونک دیں گے لیکن انہوں نے حسب معمول انتہائی متانت اور ذمہ داری سے کوئی ایسا بیان داغنے سے اجتناب کیا جس سے ن لیگ اور میاں نواز شریف کو زک پہنچنے کا احتمال پید ا ہوتا۔پریس کانفرنس کے بعد بعض سینئرز صحافیوں کا کہنا تھا کہ چودھری نثار کی یہ پریس کانفرنس گویا وہ آئے ،کھایا پیا کچھ نہیں گلاس توڑا اور چلے گئے کے مصداق ہے۔چودھری نثار کے بارے میں سینئرصحافیوں کا کہنا ہے کہ وہ ہمیشہ پریس کانفرنس میں اپنی وضاحتیں کرتے ہیں لیکن صحافی جب سوالات کرتے ہیں تو وہ پریس کانفرنس سے اٹھ کر چلے جاتے اور سوالوں کے جواب دینے سے گریز کرتے ہیں۔تازہ پریس کانفرنس کے دوران بھی انہوں نے سوال کرتے ہوئے صحافیوں کو مایوس کیا اور چلتے بنے ۔

مزید : قومی