سیور فوڈز کے عملے کا ڈی جی ماحولیاتی تحفظ ایجنسی فرزانہ الطاف پر تشدد، #BoycottSavourFoods ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ بن گیا

سیور فوڈز کے عملے کا ڈی جی ماحولیاتی تحفظ ایجنسی فرزانہ الطاف پر تشدد، ...
سیور فوڈز کے عملے کا ڈی جی ماحولیاتی تحفظ ایجنسی فرزانہ الطاف پر تشدد، #BoycottSavourFoods ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ بن گیا

  


اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) اپنے مزیدار پلاﺅ کے حوالے سے مشہور ہوٹل ’ سیور فوڈز‘ کے عملے کی جانب سے خاتون سرکاری ملازم کو ٹیم سمیت ہراساں کیے جانے پر سوشل میڈیا پر کڑی تنقید کا سامنا ہے۔

پلاسٹک تھیلوں کے خلاف پابندی پر عملدرآمد نہ ہونے پر ڈائریکٹر جنرل پاکستان ماحولیاتی تحفظ ایجنسی فرزانہ الطاف جب اپنے عملے کے ہمراہ اسلام آباد کے معروف ہوٹل ’سیور‘ پہنچیں تو ہوٹل انتظامیہ نے ان کے عملے کے ساتھ انتہائی ناروا سلوک اپناتے ہوئے انہیں دھکے دے کر باہر نکال دیا۔

سوشل میڈیا پر سامنے آنے والی ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ سیور فوڈز کے عملے نے نہ صرف میڈیا کے ساتھ بد تمیزی کی بلکہ فرزانہ الطاف کو بھی دھکے دیے۔

ویڈیو سامنے آنے کے بعد ترجمان وزیر اعلیٰ پنجاب ڈاکٹر شہباز گل نے ڈی سی اسلام آباد سے قانون کے مطابق کارروائی کا مطالبہ کیا اور کہا کہ اس طرح کی بدمعاشی کو برداشت نہیں کیا جاسکتا۔

دوسری جانب سیور فوڈز کے عملے کی جانب سے بد تہذیبی کی ویڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہوچکی ہے اور ٹوئٹر پر #BoycottSavourFoods کا ہیش ٹیگ ٹاپ پر ٹرینڈ کر رہا ہے۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد


loading...