غیر قانونی کام اور تعمیرات کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے: چیف جسٹس اسلام آباد 

      غیر قانونی کام اور تعمیرات کی ہر گز اجازت نہیں دیں گے: چیف جسٹس اسلام ...

  

  اسلام آ باد (آئی این پی) اسلام آباد ہائیکورٹ نے نیول سیلنگ کلب کو سیل کرنے کا حکم برقرار رکھتے ہوئے کہا ہے کہ کہ ہر روز ایک نئی پٹیشن آتی ہے کہ قانون پر عمل نہیں ہورہا، جس کا کھوکھا ہوتا ہے اس کو نوٹس دیے بغیر گرا دیتے ہیں، جو بھی غیرقانونی کام کرے اس کی تعمیرات گرادیں تو آئندہ ایسا نہیں ہوگا، اس بات کی اجازت نہیں دیں گے۔چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے راول ڈیم کے کنارے نیوی سیلنگ کلب اور نیول فارمزکے خلاف کیسز کی سماعت کی اور عدالت نے نیول سیلنگ کلب اور نیول فارمز میں آئندہ سماعت تک تعمیرات پرپابندی برقرار رکھنے کا حکم دیا۔ دورانِ سماعت جسٹس اطہر من اللہ نے ریمارکس دیے کہ یہاں پر کوئی قانون کی حکمرانی نہیں، عدالت جو پٹیشن اٹھاتی ہے اس میں نظر آتا ہے قانون صرف کمزور کیلئے ہے، سی ڈی اے، ریونیو ڈپارٹمنٹ، متعلقہ ایس ایچ او سب ملوث ہوتے ہیں۔ عدالت نے نیول سیلنگ کلب میں صرف ریپئرنگ کے کام کی اجازت دیتے ہوئے کیس کی مزید سماعت ستمبر کے دوسرے ہفتے تک ملتوی کردی۔

چیف جسٹس اسلام آباد

مزید :

صفحہ آخر -