چارسدہ، 14 سالہ بچے کو  اجتماعی بداخلاقی کا نشان  بنانے والے 2 ملزمان گرفتار 

چارسدہ، 14 سالہ بچے کو  اجتماعی بداخلاقی کا نشان  بنانے والے 2 ملزمان گرفتار 

  

چارسدہ (بیورورپورٹ) چارسدہ پولیس نے 14 سالہ بچے کو اجتماع زیادتی کا نشان بنانے والے دو ملزمان کو گرفتار کر لیا۔ دیگر دو ملزمان کی گرفتاری کیلئے ٹیمیں تشکیل دی گئی۔ گرفتار ملزمان نے اپنے جرم کااعتراف کر لیا۔تفصیلات کے مطابق چارسدہ تھانہ سٹی کے پولیس نے  تھانہ کے حدود غریب آباد روڈ فضل آباد میں  14 سالہ لڑکے کے ساتھ اسلحہ کے نوک پر جنسی زیادتی کرنے والے چار ملزمان میں سے دو ملزمان ندیم ولد شاہ جہان او ر محمد شعیب ولدمحمد جان کو گرفتار کر لیے جبکہ دو ملزمان بسم اللہ جان ولد جان استاد اور ایک نامعلوم کے لیے ٹیمیں تشکیل دی گئی۔گرفتار ملزمان نے اپنی جرم کا اعتراف کر لیا۔ ریجنل پولیس آفیسر مردان شیر اکبر خان نے واقعے کا سخت نوٹس لیتے ہوئے ڈی پی او چارسدہ محمد شعیب خان کو ملزمان کی فوری گرفتاری کے احکامات جاری کیے تھے جس پر ڈی پی او محمد شعیب خان نے ڈی ایس پی محمد اقبال خان،ایس ایچ او ریاض خان اور تفتیشی افیسر پر مشتمل ٹیم تشکیل دے کر ملزمان کی گرفتاری کا ٹاسک حوالہ کیا تھا۔تفتیشی ٹیم نے جدید سائنسی خطوط پر کاروائی کرتے ہوئے مقدمہ میں نامزد ملزما ن میں سے دو ملزمان کو گرفتار کرلیے جبکہ باقی دو ملزما ن کی گرفتاری کے لیے چھاپے جاری ہے۔تفتیش کے دوران گرفتار ملزمان نے اپنے جرم کا اعتراف کر لیا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -