عوام کے جان ومال کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے، آئی جی 

    عوام کے جان ومال کے تحفظ کیلئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرینگے، آئی جی 

  

لا ہو ر (کر ائم رپو رٹر)انسپکٹر جنرل پولیس پنجاب شعیب دستگیرنے کہا ہے کہ محرم الحرام کے دوران صوبے میں امن و امان کی فضا برقرار رکھنے کے ساتھ ساتھ سیکیورٹی ڈیوٹی پر تعینات افسران واہلکاروں کو کورونا وباء سے محفوظ رکھنا اولین ترجیحات میں شامل ہے اس لئے محرم سیکیورٹی ڈیوٹی پر تعینات فورس کوواش ایبل ماسک فراہم کئے جا رہے ہیں جوعشرہ محرم کے دوران ماتمی جلوسوں، مجالس سمیت دیگر اہم مقامات پر تعینات اافسران واہلکاروں کوکورونا وباء سے محفوظ رکھنے میں معاون ثابت ہونگے۔انہوں نے مزیدکہاکہ عزاداروں کے تحفظ کیلئے پنجاب پولیس پوری طرح الرٹ ہے اور شہریوں کے جان و مال کے تحفظ کیلئے کسی قسم کی قربانی سے ہر گز دریغ نہیں کیا جائے گا۔ آئی جی پنجاب کی ہدایت پر ایڈیشنل آئی جی ویلفیئر اینڈ فنانس نے صوبے کے تمام سربراہان پولیس کو مراسلہ بھجوادیا ہے جس کے مطابق محرم سیکیورٹی ڈیوٹی پر تعینات افسران واہلکاروں کیلئے تمام اضلاع اپنی نفری کی تعداد کے حوالے سے سنٹرل پولیس آفس سے واش ایبل ماسک حاصل کرسکتے ہیں۔ مراسلے میں صوبے کے تمام سربراہان پولیس کو ہدایت کی گئی ہے کہ ہر ضلع کی نفری کی تعداد کے حوالے سے سنٹرل پولیس آفس کے Covid-19سٹور میں ماسک موجود ہیں جسے ضلع کی جانب سے متعین کردہ افسر اتھارٹی لیٹر دکھا کر فوری حاصل کرسکتا ہے۔ جبکہ ہر ماسک 30مرتبہ دھوکر قابل استعمال بنایا جاسکتا ہے  واش ایبل ماسک محرم سیکیورٹی ڈیوٹی پر تعینات پنجاب کانسٹیبلر ی کے افسران و اہلکارو ں کو بھی فراہم کئے جائینگے۔ 

تفصیلات کے مطابق لاہور پولیس کو 6100،راولپنڈی کو3700،اٹک کو 1400،چکوال کو 900،جہلم کو 600،گوجرانوالہ کو3000،حافظ آباد کو 400،سیالکوٹ کو 1000، گجرات کو 1500،منڈی بہاؤالدین کو 1000،نارووال کو 600، فیصل آباد کو 3600،جھنگ کو1200،چنیوٹ کو 600، ٹوبہ ٹیک سنگھ کو600،ملتان کو 3000، خانیوال کو 700،لودھراں کو 700، وہاڑی کو 900،شیخوپورہ کو 1500، قصور کو 1000،ننکانہ صاحب کو 600، ساہیوال کو 800،اوکاڑہ کو 1200، پاکپتن کو1000،سرگودھا کو 1500،خوشاب کو 700،میانوالی کو 600، بھکر کو 600،بہاولپورکو 1600، بہاولنگرکو 1200،رحیم یار خان کو 1000، ڈی جی خان کو 1400،راجن پور کو 1100،لیہ کو 500جبکہ مظفر گڑھ کو 1400واش ایبل ماسک فراہم کئے جائیں گے۔ ضلع پاکپتن کو انکے متعین کردہ ماسک فراہم کئے جاچکے ہیں جبکہ باقی اضلاع میں ماسک کی فراہمی کا عمل جاری ہے۔ 

مزید :

علاقائی -