ایلون مسک نے انسان نما روبوٹ کی قیمت ٹیسلا کی الیکٹرک گاڑی سے بھی کم ہونے کا دعویٰ کردیا

ایلون مسک نے انسان نما روبوٹ کی قیمت ٹیسلا کی الیکٹرک گاڑی سے بھی کم ہونے کا ...
ایلون مسک نے انسان نما روبوٹ کی قیمت ٹیسلا کی الیکٹرک گاڑی سے بھی کم ہونے کا دعویٰ کردیا
سورس: Youtube

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا کے امیر ترین آدمی ایلون مسک کی الیکٹرک کار ساز کمپنی کی طرف سے گزشتہ سال ’انسان نما روبوٹ‘ تیار کرنے کا اعلان کیا تھا۔ اب ایلون مسک نے ان ’آپٹیمس ہیومینائیڈ روبوٹس‘ کے متعلق چشم کشا دعویٰ کر دیا ہے کہ ان روبوٹس کی قیمت ٹیسلا کی الیکٹرک گاڑی سے بھی کم ہو گی۔میل آن لائن کے مطابق یہ انسان نما روبوٹس لگ بھگ ہر وہ کام کر سکیں گے جو انسان کرتے ہیں۔ یہ روبوٹس کچن میں کھانا بنانے سے لان میں گھاس وغیرہ کی کٹائی تک اور بچوں اوربزرگوں کی دیکھ بھال تک کے کام کرنے کی صلاحیت رکھتے ہوں گے۔

ایلون مسک کا کہنا ہے کہ مستقبل میں ان روبوٹس کی قیمت اس قدر کم ہو جائے گی کہ یہ ٹیسلا گاڑی سے بھی سستے ہو جائیں گے۔ رپورٹ کے مطابق مصنوعی ذہانت کا حامل یہ آپٹیمس روبوٹ رواں سال 30ستمبر کو متعارف کرایا جا رہا ہے۔ایلون مسک نے ایک چینی سائبر سپیس میگزین کے لیے لکھے گئے آرٹیکل میں بتایا ہے کہ یہ روبوٹ ایسے کاموں کے لیے بنایا جا رہا ہے جو خطرناک ہیں یا ایسے کام جو بار بار کیے جاتے ہیں اور انسان ان کاموں پر اکتا جاتے ہیں۔ 

رپورٹ کے مطابق یہ روبوٹس دیکھنے میں ہو بہو انسان جیسے ہوں گے۔ ان کا قد 5فٹ8انچ اور وزن 125پاﺅنڈ (56کلوگرام) ہو گا۔یہ 45پاﺅنڈ (ساڑھے 20کلوگرام) وزن اٹھانے اور 5میل (8کلومیٹر) فی گھنٹہ کی رفتار سے پیدل چلنے کی صلاحیت رکھتے ہوں گے۔ 

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -