جنسی درندگی کا نشانہ بننے والی نوجوان بھارتی لڑکی کی لرز ا دینے والی داستان

جنسی درندگی کا نشانہ بننے والی نوجوان بھارتی لڑکی کی لرز ا دینے والی داستان
جنسی درندگی کا نشانہ بننے والی نوجوان بھارتی لڑکی کی لرز ا دینے والی داستان

  

نیودہلی (نیوز ڈیسک) بھارت میں خواتین کی عصمت دری کے گھناﺅنے واقعات آئے روز میڈیا میں ہلچل برپا کررہے ہیں لیکن افسوس کی بات یہ ہے کہ سامنے آنے والے واقعات سے کہیں زیادہ بھیانک واقعات دنیا کی نظروں سے اوجھل ہیں۔

دنیا کی تاریخ میں پہلی مرتبہ روبوٹ کا ٹکٹ خرید کر جہاز کا سفر

ریاست راجھستان سے تعلق رکھنے والی ایک بدقسمتی لڑکی کی داستان بھی ایک ایسا ہی المیہ ہے جس کا کوئی پرسان حال نہیں۔ یہ مظلوم لڑکی ایک تعمیراتی منصوبے پر مزدور کے طور پر کام کررہی تھی لیکن سپر وائزر کی ہوس سے بچنے کیلئے کام چھوڑ دیا۔ جب یہ اپنے گاﺅں فتح پور جانے کیلئے کاپسان ریلوے سٹیشن پہنچی تو درندہ صفت سپر وائزر اپنے بھائی کے ساتھ وہاں آن پہنچا اور اسے زبردستی اپنی جیپ میں ڈال کر ایک ویران مقام پر لے گیا۔ وہاں اس کی عصمت دری کی گئی اور جب اس نے مزاحمت جاری رکھی اور پولیس کے پاس جانے کی بات کی تو درندوں نے اسے اٹھا کر ریلوے لائن پر پھینک دیا۔ اگرچہ وہ اس کی زندگی کا خاتمہ چاہتے تھے لیکن ریل گاڑی کے نیچے آکر اس کی ٹانگیں کٹ گئیں۔ مزید ستم یہ ہوا کہ جب اسے ہسپتال سے گھر منتقل کیا گیا تو اس کی اپنی ہی ماں نے اسے قبول کرنے سے انکار کردیا اور اس کے خاوند نے بھی اسے چھوڑ دیا۔ دو سال قبل ناقابل تصور ظلم کا نشانہ بننے وای یہ مظلوم لڑکی آج بھی انصاف کیلئے دھکے کھارہی ہے جبکہ اس کی زندگی برباد کرنے والے درندے آزاد گھوم رہے ہیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس