روسی کمپنی نے پیز ا ڈیلیوری کے لیے دلچسپ سروس متعارف کروا دی

روسی کمپنی نے پیز ا ڈیلیوری کے لیے دلچسپ سروس متعارف کروا دی
روسی کمپنی نے پیز ا ڈیلیوری کے لیے دلچسپ سروس متعارف کروا دی

  

ماسکو (نیوز ڈیسک) ڈرون ٹیکنالوجی کے خونی استعمال کے بعد اب اسے لذیذ کھانے کسٹمرز تک پہنچانے کیلئے استعمال کرنا شروع کردیا گیا ہے اور ایک روسی کمپنی نے پہلی دفعہ اپنے گاہکوں کو ڈرون کے ذریعے پیزا پہنچانے کے کام کا آغاز کردیا ہے۔ڈرون ساز کمپنی CopterExpress نے چھوٹے کاپٹر ڈرون تیار کئے ہیں جو 5 کلو گرام وزن اٹھا کر 40 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے اڑ سکتے ہیں۔ ان میں جی پی ایس سسٹم اور کیمرے لگے ہیں جن کی مدد سے یہ منزل کو ڈھونڈکر مطلوبہ جگہ پیزا پہنچائیں گے۔

وہ وقت جب ایران دنیاکا سب سے بڑا سینڈ وچ بنانے میں ناکام ہو گیا ،وجہ انتہائی دلچسپ

شمالی روس کے مشہور پیزا ریسٹورنٹ Dodo Pizza نے ڈرون کے ذریعے پیزا ڈلیوری کا آغاز کردیا ہے اور انتظامیہ کا کہنا ہے کہ عنقریب اس سروس کو روس کے 18 شہروں میں متعارف کروادیا جائے گا۔ پیزا کی ڈلیوری آدھے گھنٹے کے دوران کی جائے گی اور اگر پیزا ایک گھنٹے بعد پہنچے تو کوئی ادائیگی نہ کرنا ہوگی۔ پیزا کمپنی کے سربراہ کا کہنا ہے کہ 2018ءتک ان کے پاس 25 ڈرون ہوں گے جو سارے ملک میں پیزا ڈلیوری کا کام کریں گے۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی