ذکی الرحمن لکھوی کی ضمانت پر مودی بھی بھڑک اٹھا

ذکی الرحمن لکھوی کی ضمانت پر مودی بھی بھڑک اٹھا
ذکی الرحمن لکھوی کی ضمانت پر مودی بھی بھڑک اٹھا

  

نئی دہلی(ویب ڈیسک)بھارتی وزیراعظم نریندر مودی نے کہا ہے کہ پشاور حملے میں چند روز بعد پاکستانی عدالت کی طرف سے ممبئی حملوں کے ملزم ذکی الرحمن کی ضمانت پر رہائی قابل مذمت ہے۔تفصیلات کے مطابق مودی نے پاکستان کو سخت اور مناسب الفاظ میں اپنی تشویش سے آگاہ کر گیا ہے ۔پشاورحملے میں معصوم بچوں کی ہلاکت پر پورے بھار ت کے بچوں کی آنکھون میں آنسو ہیں ۔بھارتی پارلیمنٹ کے ایوان زیریں لوک سبھا میں بیان دیتے ہوئے نریندر مودی نے کہا کہ ممبئی حملوں کے ملزم ذکی الرحمن لکھوی کی ضمانت پر رہائی پرپاکستان کوسخت اورمناسب الفاظ الفاظ بھارتی تشویش کے بارے میںآگاہ کردیا گیا ہے ۔

انہوںنے کہاکہ پشاورکے سکول پردہشت گردوں کے حملے میں معصوم بچوں کی جانیں ضائع ہونے کے ایک روز بعدذکی الرحمن لکھوی کی ضمانت سے متعلق پاکستا نی عدالت کا فیصلہ قابل مذمت ہے ۔میں اس بارے میں فکرمند ہوں پاکستان میں کیا ہوا؟نریندر مودی نے کہا پشاور حملے میں بچوں کی ہلاکت پر پورے بھارت کے بچوں کی آنکھوں میں آنسو ہیں ۔بھارت وزیرخارنہ سشما سوراج نے بھی اپنے بیان میں ذکی الرحمن الکھوی کی رہائی سے متعلق پاکستانی عدالت کے فیصلے کو مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے پاکستان کو واضح الفاظ میں بتا دیا ہے کہ ہم ممبئی حملوں کے انتہائی مطلوب ملزم کی ضمانت پررہائی جیسی حقیقت کو قبول نہیں کرسکتے ۔ہم پاکستان کی اس دلیک کو مسترد کرتے ہیں کہ ذکی الرحمن کے خلا ف ممبئی حملوں میں ملوث ہونے کا کوئی ثبوت نہیں ملا ۔انہوں نے کہا کہ بھارت اس معاملے میںپاکستان کے موقف پر خصوصی نظر رکھے ہوئے ہے ۔ذکی الرحمن لکھوی کو ضمانت پر رہا کر کے پاکستان نے دہشت گری کیخلاف لڑنے کے اپنے عزم کا مذاق بنا دیا ہے۔

مزید : بین الاقوامی