امینہ قتل کیس ،عدالتی حکم پر مقتولہ کی قبرکشائی 21یا22دسمبر کو ہوگی

امینہ قتل کیس ،عدالتی حکم پر مقتولہ کی قبرکشائی 21یا22دسمبر کو ہوگی

کراچی (رپورٹ /ندیم آرائیں)پیر آباد تھانے کی حدود میں غیرت کے نام پر قتل ہونے والی خاتون کے کیس میں اہم موڑ آگیا ،عدالتی احکامات پر مقتولہ کی قبر کشائی 21یا 22دسمبر کو کی جائے گی ۔تفصیلات کے مطابق پیر آباد تھانے کی حدود میں چند روزقبل امینہ خان نامی لڑکی کو مبینہ طور پر اس کے والد اور دیگر رشتہ داروں نے زہر دے کر ہلاک کردیا تھا ۔مقتولہ کو محض اپنے کزن کے ساتھ تصویر بنوانے کے جرم میں موت کے گھاٹ اتارا گیا جبکہ اس کے کزن کو بھی سوات میں قتل کردیا گیا ۔لڑکی کے سفاک باپ نے بیٹی کو قتل کرنے کے بعد اس کو خاموشی سے علاقے کے پراچہ قبرستان میں سپرد خاک کردیا تھا۔بیٹی کے بہیمانہ قتل پر مقتولہ کی والدہ نے متعلقہ تھانے میں مقدمے کے اندراج کی درخواست دی لیکن پولیس نے مقدمہ درج کرنے سے انکار کردیا جس کے بعد انہوں نے بذریعہ کوریئر بشمول ایس ایس پی ویسٹ شوکت کھٹیان تمام اعلیٰ پولیس حکام کو ایک درخواست ارسال کی جس میں مقدمہ درج کرنے کی استدعا کی گئی تھی لیکن ان درخواستوں پر کوئی نوٹس نہیں لیا گیا ۔پولیس کی طرف سے مایوس ہونے کے بعد مقتولہ کی والدہ نے ڈی جے ویسٹ کی عدالت سے رجوع کیا تو عدالت نے علاقہ پولیس پر اظہار برہمی کرتے ہوئے فوری طور پر مقدمہ درج کرنے کا حکم دیا ۔عدالتی احکامات کی روشنی میں پولیس نے بالآخر مقدمے کا اندراج کرلیا ۔کیس کے تفتیشی افسر شکیل نے روزنامہ پاکستان سے بات چیت میں بتایا کیس کی تحقیقات درست سمت میں کی جارہی ہیں ۔عدالت نے مقتولہ کی قبر کشائی کے احکامات جاری کیے تھے ۔اس ضمن میں 21یا 22دسمبر کو قبر کشائی کرکے نمونے ٹیسٹ کے لیے لیبارٹری بھیجے جائیں گے ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر