اہا لیان لاہور کا ڈاکٹر عبدالقدیر کو نگران وزیراعظم بنانے کا مطالبہ

اہا لیان لاہور کا ڈاکٹر عبدالقدیر کو نگران وزیراعظم بنانے کا مطالبہ

لاہور ( حسنین چودھری/ الیکشن سیل) لاہور کے شہریوں نے نگران وزیراعظم کے لئے میڈیا میں زرگردش تمام ناموں کو مسترد کرتے ہوئے محسن پاکستان ڈاکٹر عبدالقدیر خان کو نگران وزیراعظم بنانے کا مطالبہ کیا ہے شہریوں کا کہنا تھا ڈاکٹر اے کیو خان ہی ملک میں شفاف اور غیر جانبدار الیکشن کرواسکتے ہیں ”روزنامہ پاکستان“ کی طرف سے کئے جانے والے سروے کے دوران مزنگ کے رہائشی محمد حسیب نے کہا ملک کا نگران وزیراعظم ڈاکٹر عبدالقدیر کو ہونا چاہیے میری نظر میں ان سے زیادہ شفاف انسان اس ملک کو وزیراعظم کے امیدواران کے لئے نہیں مل سکتا ہے۔ اچھرہ کے رہائشی محمد عاصم کا کہنا تھا کہ عاصمہ جہانگیر کو آئندہ نگران وزیراعظم ہونا چاہیے، عاصمہ جہانگیر ایک پڑھی لکھی باشعور اور انسانی حقوق کی علمبردار خاتون ہیں ان کی نگرانی میں آئندہ شفاف اور غیر جانبدارا ہوسکتے ہیں اور عاصمہ جہانگیر کی نگرانی میں ہونے والے الیکشن پوری دنیا میں تسلیم کئے جائیں گے۔ وارث روڈ کے رہائشی مظہر علی کا کہنا تھا کہ ڈاکٹر عبدالقدیر بہت بڑے انسان ہیں اور اس قوم کے ہیرو بھی ہیں اگر ان کی نگرانی میں الیکشن ہوں گے تو پورے ملک کو قابل قبول ہوں گے۔ پنجاب یونیورسٹی کے ایک طالب علم مدثر عزیز نے کہا عاصمہ جہانگیر اور ڈاکٹر عبدالقدیر خان دونوں پر اس قوم کو اعتماد ہے ان دونوں میں سے کوئی بھی ملک کا وزیراعظم ہونا چاہیے تاکہ آئندہ انتخابات میں کسی قسم کی دھاندلی نہ ہوسکے۔ انارکلی کے رہائشی محمد یاسر کا کہنا تھا کہ محمود اچکزئی کو نگران وزیراعظم ہونا چاہیے ان کا تعلق بلوچستان سے ہے اور بلوچستان کا احساس محروم کچھ کم ہوگا اور آئندہ ہونے والے انتخابات چاروں صوبوں کو قابل قبول ہوں گے۔ ساندہ کے رہائشی غلام قادر نے کہا کہ میری نظر میں جتنے نام زیر غور ہیں ان میں ڈاکٹر عبدالقدیر کے نام پر سب کو اتفاق ہونا چاہیے کیونکہ ڈاکٹر عبدالقدیر اس ملک کے دفاع کو مضبوط بناسکتا ہے تو آئندہ انتخابات بھی شفاف اور غیر جانبدار ہوں گے۔ ڈاکٹر عبدالقدیر کی اس ملک کے لئے بہت خدمات ہیں وہ اس ملک کی تقدیر بدل سکتے ہیں اور انتخابات پر کسی کو بھی اثر انداز نہیں ہونے دیں گے۔ سنت نگر کے رہائشی ریاض حسین نے کہا کہ اس ملک کی روایت ہے کہ ہر الیکشن پر اعتراضات کئے جاتے ہیں آئندہ ہونے والے انتخابات کو اگر اعتراضات سے پاک بنانا ہے تو ڈاکٹر عبدالقدیر کو اس ملک کا نگران وزیراعظم بنادیا جائے تاکہ ان کی نگرانی میں بالکل غیر جانبدار الیکشن منعقد ہوسکیں۔ شاہدرہ موڑ کے رہائشی خرم نے کہا کہ میری نظر اس ملک کا نگران وزیراعظم ایسا انسان ہونا چاہیے کہ جس پر تمام سیاسی جماعتیں متفق ہوں۔ کیونکہ آئندہ الیکشن میں اگر کوئی بھی جانبدار وزیراعظم بن گیا تو انتخابات کے نتائج بالکل مختلف ہوں گے اور ملک کے اندر نیا بحران پیداہوجائے گا۔ اس لئے تمام سیاسی جماعتوں کو چاہیے کہ وہ ڈاکٹر عبدالقدیر جیسے انسان کو نگران وزیراعظم بنادیں تاکہ کوئی شخص الیکشن کے نتائج پر انگلی نہ اٹھاسکے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1