گل ایڈوائزرکی عدم تقرری‘ وارنٹ جاری کرنے پر ایف پی سی سی آئی کی مذمت

گل ایڈوائزرکی عدم تقرری‘ وارنٹ جاری کرنے پر ایف پی سی سی آئی کی مذمت

  

لی

کراچی (اکنامک رپورٹر)ایس ای سی پی کی رجسٹر ڈ کمپنیوں کو لیگل ایڈوائزر کی تقر ری نہ کر نے پر قا بل ضمانت وارنٹ جا ری کرنے پر فیڈریشن آف پا کستا ن چیمبرزآف کا مر س اینڈ انڈ سٹر ی کے صدر زکر یا عثمان اور نا ئب صدور خر م سعید اور مظہر علی ناصر نے شدید مذمت کی ہے اور کہا کہ ایس ای سی پی کایہ انتہا ئی اقدا م غلط ہے ۔ آج کے اس تر قی یا فتہ دور میں اگر کو ئی کمپنیاں ایس ای سی پی کے قو انین کو پورا نہیں کر تی تو( ایس ای سی پی) انکو بذریعہ ای میل ،فیکس یا کو رئیر کے ذریعے نو ٹس جا ری کر سکتی ہے ۔ایف پی سی سی آئی کے پا س بہت سی شکا یا ت ہیں جن میں کسی قسم کا کو ئی نوٹس جا ری نہیں کہا گیا ۔

 اور کچھ کمپنیوں کو توبغیر سمن بھی جا ری کیے ایس ای سی پی نے انتہا ئی اقدا م اٹھا کر قا بل ضما نت وارنٹ جا ری کر دیے ۔

واضح رہے کہ ایس ای سی پی کے قا نون کے تحت ایسی رجسٹر ڈ کمپنی جسکا ادا شدہ سر مایہ پا نچ لا کھ رو پے ہو اسے ایک لیگل ایڈوائزر مقر ر کر نا چا یئے اور اسے اسکا مشاہر ہ بھی دیا جا ئے ۔ فیڈریشن کے صدر جناب زکریا عثمان نے کہا کہ بنیا دی طور پر یہ قا نون ہی غلط اور نا قص ہے کیو نکہ اگر ایک شخص کو لیگل ایڈوائز ر کی ضرور ت ہی نہ ہو یا وہ خود ہی قو انین کو جا نتا اور سمجھتا ہو اور اپنا دفا ع کر سکتا ہو تو ہر وہ مشا ہر ہ پر لیگل ایڈوائز ر کیوں رکھے ۔ اسکے با وجو د بھی اگر کسی کمپنی نے لیگل ایڈوائزر نہیں مقر ر کیاایس ای سی پی کو بتا نا بھو ل گیا تو یہ کسی بھی طر ح سے قا نونی طور پر جر م نہیں کہلا ئے گا ۔ کیو نکہ تما م کمپنیاں ایس ای سی پی سے رجسڑڈ ہیں اور سر کا ری خزانہ میں ٹیکس جمع کراتی ہیں ان کا اپنا NTNہے اور ایک چھو ٹے سے معا ملے میں انہیں مجر م بنا یا جا ئے یہ غلط ہے خو اہ وہ کمپنی بز نس کر رہی ہے یا نہیں ۔انہوں نے مز ید کہا کہ ایس ای سی پینے یہ بھی نہیں غو ر کیا کہ کچھ کمپنیوں کے ڈائریکٹر غیر ملکی تھے اور ان کے خلا ف بھی وارنٹ جا ری کر دیے ۔ جو کہ با لکل معمول کے خلا ف ہے کیونکہ وہ فا رن نیشنل پاکستا ن میں سر مایہ کا ری کر رہے ہیں ۔ اور صر ف لیگل ایڈوائز ر مقر ر نہ کرنے پر ان کے خلا ف ورانٹ جا ری کیے جا ئیں ۔ اس سے غیر ملکی سر ما یہ کا ر کو کیا پیغا م جا رہا ہو گا ۔ لہذا ایف پی سی سی آئی نے وزیر اعظم پا کستا ن ، کا مر س منسٹر اور چیئر مین BOIاور صو بائی حکو متو ں سے مطا لبہ کیا ہے کہ وہ ایس ای سی پی کو ایسی کا روائیوں سے رو کیں تا کہ وہ مز ید کو ئی وارنٹ گر فتا ر ی جا ری نہ کر یں اور جو وارنٹ جا ری ہو چکے ہیں انہیں واپس لیا جا ئے ۔ انہوں نے سینٹ اور قو می اسمبلیوں کی مجلس قا ئمہ بر ائے کا مرس اینڈ ٹر یڈ سے بھی مطا لبہ کیا ہے کہ اس معا ملے کا نو ٹس لیں اور ان قا نون میں تر میم کر ائیں ۔

مزید :

کامرس -