دنیا میں پانی کے مسائل کا سب سے زیادہ سامنا پاکستان کو ہے : اے ڈی بی

دنیا میں پانی کے مسائل کا سب سے زیادہ سامنا پاکستان کو ہے : اے ڈی بی

  

اسلام آباد(اے پی پی) ملک میں نہروں کے ذریعے 80 فیصد زرعی رقبہ کی آبپاشی کی جاتی ہے، زرعی شعبہ کی ترقی کےلئے آبپاشی کے نظام کی بہتری کلیدی حیثیت رکھتی ہے۔ ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) کی رپورٹ کے مطابق دنیا میں پانی کے مسائل کا سب سے زیادہ سامنا پاکستان کو ہے جہاں پر پانی کی قلت روز بروز بڑھتی جارہی ہے۔ رپورٹ کے مطابق ملک میں نہ صرف زرعی شعبہ کو ہی پانی کی قلت درپیش ہے بلکہ انسانی ضروریات کےلئے پانی کی دستیابی بھی فی کس ایک ہزار کیوبک میٹر سالانہ سے کم ہے۔ پاکستان سے ملتے جلتے موسم کے ممالک میں پانی کے ایک ہزار دن کے ذخیرہ کی سفارش کی جاتی ہے جبکہ پاکستان میں موجودہ آبی ذخائر سے ملک کی صرف 30 دن کی ضروریات کو پورا کیا جاسکتا ہے۔ پانی کی روز بروز بڑھتی ہوئی طلب کی پیش نظر آبی ذخائر سے پانی کی رسد کو بڑھانا وقت کی ضرورت ہے۔ رپورٹ کے مطابق موسمیاتی تبدیلیاں بھی آبی ذخائر پر منفی اثرات مرتب کرتی ہیں جن کے باعث بعض اوقات ملک میں موجود آبی ذخائر بھی بھر نہیں پاتے۔ اے ڈی بی نے غذائی تحفظ کے استحکام اور زرعی پیداوار میں اضافہ کےلئے پانی کے ذخائر ، تقسیم اور آبپاشی کے پانی کی قیمتوں میں کمی کے اقدامات کو انتہائی اہم قرار دیا ہے۔ زرعی شعبہ میں اصلاحات کے ذریعے پاکستان کی زرعی پیداوار میں دوگنا اضافہ کیا جاسکتا ہے ۔

مزید :

کامرس -