کاشتکارفصلوں کو کیڑوں اور بیماریوں سے محفوظ رکھیں: محکمہ زراعت

کاشتکارفصلوں کو کیڑوں اور بیماریوں سے محفوظ رکھیں: محکمہ زراعت

  

لاہور(کامرس رپورٹر)کاشتکار یکم مارچ سے کاشت ہونے والی کپاس کی اگیتی فصل کو کیڑوں اور بیماریوں سے بچانے اوربہترین پیداوار کے حصول کے لیے پیشگی اقدامات کریں۔ محکمہ زراعت پنجاب کے ترجمان کے مطابق کپاس کی عنقریب کاشت ہونے والی فصل کو ملی بگ اور دیگر کیڑوں سے بچانے کے لیے کھیتوں کے اردگرد کھالوں ، بنوں اور وٹوں پر موجود جڑی بوٹیوں کی تلفی کو یقینی بنائیں ۔کپاس کی چھڑیوں کوالٹ پلٹ کر کے کچرہ وغیرہ تلف کرلیں کیونکہ اس کے اندر گلابی سنڈی کے زندہ پیوپے موجود ہوتے ہیں۔ کپاس کی چھڑیوں کے ڈھیروں کے نزدیک گلابی سنڈی کے جنسی کشش کے پھندوں یا روشنی کا بندوبست کریں۔ بنولے کو دھوپ لگا کر بوائی سے قبل کاشت کرلیں۔ کیونکہ سردیوں کے دوران گلابی سنڈی بنولے کے اندر دوبیجوں کو جوڑ کر ان کے اندر سرمائی نیند سوتی ہے ۔

جننگ فیکٹریوں کے کچرہ میں بھی گلابی سنڈی موجود ہو سکتی ہے ۔ اس لیے کچرہ اور متاثر بیجوں کو تلف کر دیں۔ کپاس کی موڈھی فصل ہرگز نہ رکھیں ۔ کیونکہ کپاس کے مڈھوں سے موسم بہار کی آمد پر نئے شگوفے نکلنا شروع ہو جاتے ہیں ۔ جو نہ صرف کیڑوں کی آماہ جگاہ بنتے ہیں بلکہ پتہ مروڑ وائرس اور ملی بگ کے پھیلانے کا بھی سبب بنتے ہیں ۔ وائرس سفید مکھی کے ذریعے بہاریہ فصلوں ، جڑی بوٹیوں اور متبادل میزبان پودوں سے کپاس کی فصل پر منتقل ہوتا ہے ۔ اس لیے ان متبادل میزبان پودوں مثلاََ سورج مکھی ، کدو خاندان کی سبزیات ، آلو ، ٹماٹر اور دیگر جڑی بوٹیوں پر وائرس و سفید مکھی کا تدارک انتہائی اہم ہے ۔ سفید مکھی پر قابو پانے کے لیے انسیکٹ گروتھ ریگولیٹرز (IGR's)مثلاََ بپرو فیزین کا استعمال انتہائی مفید ہے ۔ترجمان نے مزید بتایا کہ کپاس کی فصل کے بیشمار نقصان رساں کیڑے کسی نہ کسی حالت میں کپاس کی باقیات ، کپاس کے بعد خالی کھیتوں یا متبادل میزبان فصلوں ، سبزیوں اور جڑی بوٹیوں پر موجود رہتے ہیں ۔ سردیوں کے دوران نقصان رساں کیڑے تعداد میں کم ہوتے ہیں مگر آئندہ فصل پر یہی کیڑے افزائش نسل کر کے ایک بہت بڑے نقصان کا باعث بنتے ہیں ۔ کپاس کی ملی بگ پودوں ، جڑی بوٹیوں اور فصلات پر سردیوں کے دوران زندہ حالت میں موجود رہتی ہے ۔ اس دوران جس پودے پر بھی ملی بگ نظر آئے اس پر فوراََ زہر پاشی کریں یا پھر پودے کو احتیاط سے اکھاڑ کر تلف کریں۔

مزید :

کامرس -