چھٹا پاکستان توانائی فورم 27فروری کواسلام آباد میں شروع ہوگا

چھٹا پاکستان توانائی فورم 27فروری کواسلام آباد میں شروع ہوگا

  

کراچی (اکنامک رپورٹر) شیمراک کانفرنسزانٹرنیشنل کے زیراہتما م چھٹا پاکستان توانائی فورم 2014 ء27فروری کومیرٹ ہوٹل اسلام آباد میں شروع ہوگا جس کا افتتاح وزیر مملکت برائے پیٹرولیم اور قدرتی وسائل جا م کمال خان کریں گے۔ توقع ہے کہ توانائی کے شعبے سے ماہرین کی سالانہ اسمبلی، ملک کودرپیش توانائی کے بنیادی مسئلہ پربحث کا آغازکریگی ۔اجلاس کو چار سیشن میں تقسیم کیا گیا ہے جس میں پہلے سیشن کی صدارت سابق سیکرٹری پٹرولیم ڈاکٹرگل فراز احمد ملک کریں گے ۔اس سیشن کے دوران تیل اورگیس کے شعبے میں تحقیق اورپیداوارکی سرگرمیوں پر توجہ مرکوزرکھی جائے گی۔او جی ڈی سی ایل ، اوشیئن اور پی ایس او سمیت معروف تنظیموں کے چیف ایگزیکٹیوزکی سطح کے کلیدی فیصلہ ساز، پینل مباحثے میں حصہ لیں گے۔”توانائی کے متبادل ذرائع “ پر سیشن کی صدارت ڈاکٹر اے ایچ نیئرکریں گے جس میں ونڈا ور سولر انرجی سمیت متبادل توانائی کے مختلف ذرائع زیربحث لائے جائیں گے۔ پاورسیکٹرپر سیشن ، آئی پی پیزایڈوائزری کونسل کے چیئرمین اور سابق سیکرٹری پٹرولیم عبداللہ یوسف کی زیر صدارت میں ہوگا جس میں پاکستان اٹامک انرجی کمیشن ، سندھ اینگروکول مائننگ کمپنی ، کوٹ ادو پاور کمپنی اور پرائیویٹ پاور انفراسٹرکچر بورڈکی جانب سے سینئر ایگزیکٹوز شرکت کریں گے

۔اختتامی سیشن میں توانائی کے شعبے میں سرمایہ کاری پربات چیت کی جائے جس میں اعلی سرکاری حکام اور سندھ، بلوچستان ، پنجاب اور خیبرپختونخوا صوبوں سے ممتاز رائے ساز شرکت کریں گے۔ کانفرنس کے چیئرمین مینن روڈریگوئس نے کہا ہے کہ پاکستان میں توانائی کی مانگ تیزی سے بڑھ رہی ہے ، پیداوار ناکافی ہے اور بجلی کا بحران صنعتوں اور ریگولیٹرزکو چیلنج کررہاہے ۔انہوں نے کہا کہ تیل اورگیس کی صنعت ، پاورسیکٹر اور متبادل قابل تجدید ذرائع کا استعمال اس مسئلے کا پائیدار حل ہے۔

مزید :

کامرس -