2013ءمیں ڈکیتی، راہزنی کے 90سے زائد گینگ گرفتار کئے گئے

2013ءمیں ڈکیتی، راہزنی کے 90سے زائد گینگ گرفتار کئے گئے

  

لاہور(کرائم سیل) سی آئی اے پولیس کی جانب سے ڈاکوﺅں، راہزنوں ، ڈکیتی قتل، اندھے قتل اور اغواءبرائے تاوان سمیت دیگر اہم واقعات کی سراغ رسانی اور ملزمان کی گرفتاری کے حوالے سے جو اعداد و شمارموصول ہوئے ہیں، اس کے مطابق سی آئی اے پولیس نے سال 2013ءمیں ڈکیتی، راہزنی اور نقب زنی کے 90سے زائد گینگ گرفتار کئے، جن سے 30کروڑ روپے سے زائد کی ریکوری کی گئی اور 2113مقدمات کی سراغ رسانی میں کامیابی حاصل کر کے قتل و ڈکیتی قتل کے 50واقعات میں ملزمان کو گرفتار کیا گیا، اغواءبرائے تاوان اور بھتہ خوری کے 24کیسز کا سراغ لگا کر ملزمان کو گرفتار کیا گیا، گاڑیاں چھیننے اور چوری کے 162مقدمات کا سراغ لگایا گیا۔ جبکہ993سے زائد خطرناک اشتہاریوں کو گرفتار کیا گیا ہے، جن میں سے متعدد ٹاپ ٹین ملزمان بھی شامل ہیں۔ اس کے علاوہ درجنوں ملزمان ایسے بھی پکڑے گئے ہیں، جن کی گرفتاری کیلئے لاکھوں روپے انعام بھی رکھا گیا تھا۔ اس حوالے سے اےس پی سی آئی اے عمر ورک نے بتایا کہ سی آئی اے کی کارکردگی کو مزید بہتر بتایا جا رہا ہے، چیک اینڈ بیلنس کے نظام کو مزید سخت کر دیا گیا ہے۔ ڈکیتی، راہزنی اور ڈکیتی قتل سمیت اغواءبرائے تاوان اور لڑکیوں سے بداخلاقی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے والے ملزمان کی گرفتاری کیلئے الگ سے ٹیمیں کام کر رہی ہیں، جس میں جدید نوعیت کے آلات کی بھی مدد حاصل کی جا رہی ہے۔ گزشتہ برسوں کی نسبت ان کی تعیناتی کے دوران سی آئی اے کی کارکردگی اچھی اور بہتر ہے۔

مزید :

علاقائی -