اب طیاروں میں کھڑکیاں نہیں ہوں گی

اب طیاروں میں کھڑکیاں نہیں ہوں گی
اب طیاروں میں کھڑکیاں نہیں ہوںگی
کیپشن: اب طیاروں میں کھڑکیاں نہیں ہوںگی

  

بوسٹن(مانیٹرنگ ڈیسک)سپرسونک طیارے تیار کرنے والی ایک کمپنی نے کہا ہے کہ وہ جہازوں کی دیواروں میں کھڑکیوں کی جگہ سکرین لگانے کا منصوبہ رکھتی ہے۔طیارے کے باہر لگے ہوئے کیمرے سے لی گئی تصویریں اس سکرین پر نظر آئیں گی۔ مسافر ان تصاویر کو مدھم یا تبدیل کر سکیں گے۔امریکی طیارہ ڈیزائن کرنے والی کمپنی سپائک ایرو سپیس کا کہنا ہے کہ کھڑکیاں ہٹانے سے طیارے کے مرکزی حصے کو ڈیزائن کرنے اور بنانے میں آسانی ہوگی تاہم یہ سپر سونک طیارہ2018 ءتک لانچ ہو گا۔کمپنی نے اپنی ویب سائٹ پر ایک بلاگ میں کہا ہے کہ کھڑکیوں سے طیارے کا وزن بڑھ جاتا ہے لیکن فلیٹ سکرین لگانے سے یہ مسئلہ حل ہو جائے گا۔یہ طیارہ بنانے پر آٹھ کروڑ امریکی ڈالر لاگت آئے گی جبکہ اس جہاز پر 18 مسافر سفر کر سکیں گے جو نیویارک سے لندن تک کا سفر تین سے چار گھنٹے میں طے کریں گے۔ عام طیارے میں یہ فاصلہ چھ سے سات گھنٹے میں طے کیا جاتا ہے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی -