قیامت آنے میں دودن باقی ۔۔۔

قیامت آنے میں دودن باقی ۔۔۔
قیامت آنے میں دودن باقی ۔۔۔
کیپشن: قیامت آنے میں دودن باقی ۔۔۔

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)دنیا کے خاتمے کی پیش گوئیا ں مختلف تہذیبوں کی جانب سے کی گئی ہیں ۔ابھی مایا تہذیب کی پیش گوئی پرانی نہیں ہوئی تھی کہ وائی کنگز کی پیش گوئی آگئی ہے ۔ان پیش گوئیوں کے علاوہ ناسا حکام کا بھی کہنا ہے کہ زمین کو خلاءسے آنے والے شہاب ثاقبوں سے شدید خطرات کا سامنا ہے اور کوئی بھی بڑا شہاب ثاقب زمین پر تباہی لا سکتا ہے۔

وائی کنگز تہذیب کی پیش گوئی کے مطابق ہماری زمین بروز ہفتہ 22فروری 2014ءکو ختم ہو والی ہے ۔وائی کنگ کی تہذیب کی کتابوں کے مطابق 22فروری کو متعدد قدرتی آفات اور ایسا کچھ انوکھا ہو گا کہ زمین پا نی میںڈوب جائے گی۔وائی کینگز تہذیب ماننے والوں کا خیال ہے کہ سمندر سے ایک سانپ اور زمین کے اندر سے ایک ڈریگن نکلے گا جس سے مقابلے کے لیے روحیں آئیں گی جس کہ بعد شدید ترین سرد موسم انسانون کو ختم کر کے رکھ دے گا۔پیش گوئی میں تو یہ بھی کہا گیا ہے کہ زمین کے تباہ ہونے کے بعد صرف 2ہی انسان زندہ بچ سکیں گے جو ایک نئی زمین پر پہنچ کر رہیں گے ۔موجودہ عہد کے وائی کنگز نے تو اس کی تیاریاں بھی شروع کر دی ہیں اور برطانیہ میلہ منا رہا ہے جو بروزہفتہ ہی ختم ہو گا ۔

دوسری جانب سے ناسا حکام کا کہنا ہے کہ زمین کے نزدیک سے بڑے شہاب ثاقب گزر رہے ہیںاور یہ کسی بھی وقت زمین کی طرف رخ کر کے تباہی مچا سکتے ہیں ۔گزشتہ ہفتے بھی جنوبی امریکہ میں شہاب ثاقب گرنے سے کافی تباہی آچکی ہے۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -