مساجد، دربار، بازار اور اہم تنصیبات کی کڑی نگرانی، اضافی نفری تعینات

مساجد، دربار، بازار اور اہم تنصیبات کی کڑی نگرانی، اضافی نفری تعینات

  

ملتان ، ساہوکا(سپیشل رپورٹر، سٹی رپورٹر، نمائندہ پاکستان) ملکی حالات کے پیش نظر مساجد ، درباروں ، ہاڑاروں ، خانقاہوں اور اہم تنصیبات کی کڑی نگرانی کی جارہی ہے، حکومتی اداروں نے ہائی الرٹ جاری کردیا ہے اور درباروں پر آنے والے زائرین کی سخت تلاشی لی جارہی ہے، اس سلسلے میں ملتان سے سپیشل رپورٹر، سٹی رپورٹر کے مطابق قائمقا م کمشنر ملتا ن ڈ ویژ ن نا در چٹھہ نے کہا ہے کہ حکومت پنجاب کی ہدایت پر پورے ملتان ڈویژن کی سکیورٹی ہائی الرٹ کر دی گئی ہے ۔ملکی حالات کے پیش نظر مساجد ،درباروں ،بازاروں اور تمام اہم تنصیبات کی کڑی نگرانی کی جارہی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز کمشنر آفس میں منعقدہ سول سو سائٹی ،تاجر برادری اور صنعتکاروں سمیت ،میرج ہال ،سینما گھر مالکان کے مشترکہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل زاہد اکرام ،ایس ایس پی آپریشنز عمارہ اطہر اور متعلقہ محکموں کے نمائندگان بھی اس موقع پر موجود تھے ۔قائم مقام کمشنر ملتان نادر چٹھہ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تاجر برادری اور تمام مکتبہ فکر کے نمائندے اپنے کاروباری مراکز اور دفاتر کی سکیورٹی میں اضافہ کریں ، اس سلسلے میں حکومت تمام اداروں کوخصوصی اسلحہ لائسنس جاری کرے گی۔ ریسٹورنٹس ،میرج ہالز اور سینما گھروں سمی تمام اہم عوامی مقامات پر داخلے کے وقت سخت تلاشی اور واک تھرو گیٹس کا اہتمام کیا جائے جبکہ مخصوص مقامات پر سکیورٹی کیمرے بھی نصب کئے جائیں ۔قبل ازیں ایس ایس پی آپریشنز عمارہ اطہر نے کہا کہ تعلیمی اداروں اور کاروباری مراکز سمیت عبادت گاہوں پر اضافی نفری تعینات کر دی گئی ہے ۔ ضلعی پولیس انتظامیہ کی سیکورٹی ایڈ وائزی کمیٹی نے زیر دفعہ 6پنجاب سیکورٹی آٖ ف حساس تنصیبات آرڈیننس2015کے تحت ضلعی بھر کی تما درگاہوں و مذہبی مقامات کو مراسلہ جاری کیا ہے جس میں تحریر کیا گیا ہے کہ زائرین کو واک تھر و گیٹ لگا کر اندر جانے کے لئے گزارا جائے ، اور اس کی باقاعدہ مانیٹرنگ کی جائے ، مرد اور خواتین کی تلاشی بذریعہ میٹل ڈیکٹر کے ذریعے لی جائے ،بلڈنگ کے اندر اور باہر مختلف زاویوں سے سی سی ٹی وی کیمرے نصب کئے جائیں چار دیواری کی اونچائی کم از کم 8فٹ ہو اور اس پر خاردار تار لگائی جائے ، بلڈنگ کے انٹری گیٹ کامورچہ بنائیں زائرین کی پارکنگ کا انتظام کم از کم 100گز کے فیصلے پر کیا جائے اور گیٹ کے سامنے کنکریٹ کے زگ زیگ بنائیں جائیں دریں اثناء گذشتہ روز چھٹی کے باجود محکمہ اوقاف ملتان زون کے دفاتر کھلے رہے اور محکمہ اوقاف زونل آفس کا عملہ ڈیوٹی پر حاضر رہا اس سلسلے میں بتایا جا تا ہے کہ محکمہ اوقاف کی جانب سے اتوار کے روز درباروں پر سیکورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے تھے جس کی چیک کرنے کے لئے ملتان زون کے ایڈ منسٹریٹر شاہد حمید ورک جبکہ ہیڈ آفس لاہو ر میں بھی آن لائن سسٹم کے ذریعے پنجاب بھر کے درباروں کی سیکورٹی کا جائزہ لیاجاتا ہے لاہور اور سہیون شریف میں ہونے والے دھماکوں کے باعث ملتان میں اولیا ء کرام کی درگاہوں پر زائرین کی شدید کمی محسوس کی گئی جبکہ قلعہ کہنہ قاسم باغ سمیت شہر میں موجود مختلف تفریح مقامات پر بھی شہریوں کی کمی کو محسوس کیا گیا ۔محکمہ اوقاف ملتان زون کے ایڈ منسٹریٹر شاہد حمید ورک نے کہاہے کہ ملتان کے تمام درگاہوں کی سیکورٹی سخت کر دی گئی ہے جبکہ ہیڈ آٖفس سے تربیت یافتہ اہلکار وں کی ڈیوٹیاں درباروں پر لگا دی گئی ہیں۔انہوں نے کہاہے کہ دربار حضرت مخدوم عبد الرشید حقانی کو تھانہ مخڈوم رشید کی جانب سے بند کرانا افسوس ناک ہے جس سے زائرین کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہاہے انہوں نے کہاہے کہ تھانہ مخدو م رشید کو چاہیے کہ وہ دربار کو سیکورٹی فراہم کرے اور ہم،بھی اس سلسلے میں اقداما ت کررہے ہیں دربار بند کرانا مسئلے کا حل نہیں ہے ۔ساہوکاسے نمائندہ پاکستان کے مطابق آئی جی پنجاب ،ڈی پی او وہاڑی عمر سعید ملک کے احکامات کی روشنی میں حالیہ ملک میں دہشت گردی کی صورت حال سے نمٹنے کے لئے علاقہ میں اہم مقامات اورر عبادت گاہوں کی سیکیورٹی سخت کر دی گئی ہیں اور پولیس ملازمین کو اگاہ کیا گیا کہ دوران ناکہ بندی ڈیوٹی پر مسلح محافظ ہائی الرٹ رہیں اور سرکاری گاڑیوں کو بغیر ڈرائیور ہر گز نہ چھوڑ جائے خاص کر اے کیٹگری میں شامل بر صغیر کے عظیم روحانی بزرگ دربار بابا حاجی شیر کے مزار پر پولیس کی بھاری نفری تعینات کر دی گئی ہے۔ سانحہ لعل شہباز قلندر کے بعد علاقہ میں دربار کے احاطہ کی چار دیواری پر لگائی گئی کھار دار تاریں ، 8سی سی ٹی کیمرے اور واک تھرو گیٹ فنگشنل کر دیئے ہیں ہر آنے والے زائرین کو میٹل ڈی ٹیکٹر چیکنگ کے واک تھرو گیٹ سے گزرنے کے بعد اندر داخلے کی اجازت دی جارہی ہے ایس ایچ او ساہوکا فلک شیر بھٹی نے کہا ہے کہ زائرین کے جان ومال کی حفاظت کے لئے پولیس کے جوان ہمہ قت تیار ہیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -