باجور ایجنسی کے عوام نے قیام امن کے لئے بے پناہ قربانیاں دی ہیں:بریگیڈیئر امر کیاتی

باجور ایجنسی کے عوام نے قیام امن کے لئے بے پناہ قربانیاں دی ہیں:بریگیڈیئر ...

  

باجوڑایجنسی ( نمائندہ خصوصی ) باجوڑایجنسی کے ترکھانی اور اتمانخیل قبائل کاسکیورٹی فورسز اور پولیٹیکل انتظامیہ کیساتھ گرینڈ جرگہ۔قبائلی جرگے نے پولیٹیکل انتظامیہ اور سیکورٹی فورسز کے ساتھ مکمل تعاون جاری رکھنے اور اپنے علاقوں میں امن کمیٹیاں فعال کرنے اور سرحدی علاقوں میں گشتیں موثر بنانے کا اعلان کیاہے اور کہا ہے کہ دہشت گردوں کی سہولت کاروں کیخلاف قبائلی روایات کے تحت سخت کاروائیاں عمل میں لائی جائیگی ،دہشت گردی میں ملوث افراد کے گھر وں کو مسمار کرنے سمیت انہیں علاقہ بدر کیاجائیگا۔یہ اعلان ترکھانی اور اتمانخیل قبائل کے مختلف قبیلوں سے تعلق رکھنے والے عمائدین اور زعماء نے اتوار کے روز صدرمقام خار میں ایک گرینڈ جرگہ سے خطاب میں کیاہے ۔ اس موقع پر سیکٹر کمانڈر نارتھ بر یگیڈئر عامر کیانی ،کمانڈنٹ باجوڑ سکاؤٹس کرنل نیئر زمان ، پولیٹکل ایجنٹ انجینئر عامرخٹک ، اے پی اے خا رمحمد علی خان اور دیگر حکام سمیت قبائلی عمائدین کی ایک بڑی تعداد بھی موجود تھے ۔ جرگہ سے خطا ب کرتے ہوئے سیکٹر کمانڈر بریگیڈئر عامر کیانی ، کمانڈنٹ باجو ڑسکاؤٹس کرنل نیئر زمان اور باجوڑایجنسی کے پولیٹکل ایجنٹ انجینئر عامرخٹک نے کہاکہ باجوڑایجنسی کے قبائل نے اپنے اپنے علاقوں میں حکومتی عملداری اور امن کی بحالی کے لیے جو قربانیاں دی ہیں وہ انتہائی قابل تحسین ہے ۔سیکٹر کمانڈر بر یگیڈئر عامر کیانی ، کمانڈنٹ باجوڑ سکاؤٹس کرنل نیئر زمان اور پولیٹیکل ایجنٹ عامر خٹک نے کہاکہ حکومت کو باجوڑایجنسی کے قبائل کے جذبہ حب الوطنی اور بہادری پر فخرہے مگر کچھ عرصے سے قبائلی مشران اپنی ذمہ داریاں صحیح طریقے سے نہیں نبھارہے اور عسکریت پسند علاقے کا امن تبا ہ کررہے ہیں اگر آئندہ کسی شخص کو دہشت گردی میں ملوث پایاگیا یا کسی نے مشتبہ شخص کو پناہ دی تو ان کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائی جائیگی ۔انہوں نے کہا کہ باجوڑایجنسی میں ایسے لو گ موجود ہیں جو تخریبی کاروائی میں ملوث ہیں عمائدین علاقہ سکیورٹی فورسز کیساتھ تعاون کرکے مشکوک افراد کی نشاندہی کریں اگر عمائدین علاقہ ہمیں معلومات فراہم نہیں کریں گے تو پھر ہم کاروائی پر مجبور ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ باجوڑایجنسی کے عوام نے آزادی پاکستان سے لیکر اب تک ملک کیلئے قربانیاں دی ہیں ۔پاک افغان سرحد مکمل طورپر بند کیاگیاہیں ۔باجوڑایجنسی کا نام خودکش بمبار کے سہولت کار نے لیکر پورے باجوڑ کے عوام کو شرمندہ کیاہیں۔ اور اگرلوگوں اور عمائدین نے دہشت گردوں کی نشاندہی نہیں کی تو مزید بدنامی ہوگی۔انھوں نے کہاکہ عسکریت پسند ہمارے تہذیب ترقی اور خوشحالی کے بدترین دشمن ہے۔ انھوں نے عمائدین پر زور دیا کہ وہ اپنے علاقوں میں مشتبہ افراد کی سرگرمیوں پر نظر رکھ کر اپنے علاقوں میں امن وامان اور حکومتی عملداری برقرار رکھنے اور اپنے علاقہ کو عسکریت پسندوں سے صاف کرنے میں تعاون جاری رکھ کر ایجنسی کو امن کا گہوارہ بنانے میں اپنا کردار ادا کریں ۔انھوں نے کہا کہ مشران علاقائی تنازعات اور ذاتی دشمنیوں کے خاتمے کیلئے کوششیں کریں کیونکہ علاقائی تنازعا ت اور دشمنیاں بھی امن کے خرابی کا سبب بن رہے ہیں ۔ جرگے سے خطاب کرتے ہوئے قبائلی مشران ملک بہادر شاہ ، ملک عبدالعزیز ، ملک حفظ الرحمن ، ملک قادر خان، ملک سعید الرحمن اور دیگر نے کہاکہ باجوڑایجنسی کے قبائل نے ایک ایسے وقت میں جب ایجنسی میں دہشت گردوں ا ور عسکریت پسندوں کے سرگرمیاں اپنی پوری عروج پر تھے نے اپنی مدد اپ کے تحت عسکریت پسندوں کے خلاف اٹھ کھڑے ہوکر اپنے علاقہ کو دہشت گردوں سے صاف کرنے اور علاقہ میں حکومتی عملداری کی بحالی میں اہم کردار ادا کیا ۔ عمائدین نے کہاکہ باجوڑ ایجنسی کے قبائل نے حکومتی عملداری کی بحالی کے لئے بہت سی عمائدین کی قربانیاں دی ہیں لیکن دہشت گردوں اور ملک دشمن عناصر کے سامنے ہتیار نہیں ڈالے ہیں اور آئندہ بھی ملک وقوم کیلئے کسی قسم کے قر بانی سے دریغ نہیں کر ینگے اور ایجنسی کے کسی بھی علاقے میں ملک دشمن عناصر کو پناہ نہیں دینگے اور جس شخص کو ملوث پایاگیا تو اُن کیخلاف قبائلی روایات کے تحت سخت کاروائی عمل میں لائی جائیگی اور ان کے گھر وں کو مسمار کرکے انہیں علاقہ بدر کریں گے ۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -